شامی فوج نے درعا پر ملکی پرچم لہرا دیا

اردن کی سرحد کے قریب واقع درعا ہی وہ شہر جہاں سے چھ برس قبل شامی صدر بشار الاسد کے خلاف مزاحمتی تحریک شروع ہوئی تھی۔ دوسری طرف روسی فوجی اہلکار باغیوں سے مذاکرات کے لیے درعا پہنچ چکے ہیں۔