Thanks Thanks:  0
Likes Likes:  0
Results 1 to 12 of 12

Thread: شہاب نامہ پہ تبصرہ

Hybrid View

Previous Post Previous Post   Next Post Next Post
  1. #1
    Site Managers

    Join Date
    Jun 2007
    Location
    پاکستان
    Posts
    54,986
    Mentioned
    42 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)

    شہاب نامہ پہ تبصرہ

    السلام علیکم
    یقینا'' سب ہی اردو پڑھنے والوں نے شہاب نامہ کا نام سنا ہو گا۔ کچھ لوگ اس کتاب کو کافی پسند کرتے ہیں اور کچھ ناپسند کرتے ہیں۔ سب کے پاس اپنے اپنے پوائنٹس ہیں۔ ویسے میں بھی اس کو پسند کرنے والوں میں سے نہیں ہوں لیکن پہلے اس کے کچھ اچھے پوائنٹس لکھتا ہوں اور پھر بعد میں کچھ ایسے پوائنٹس بھی لکھوں گا جو مجھے پسند نہیں آئے۔

    اچھے نکات

    ۱۔ سب سے اچھا پوائنٹ تو اس کتاب کا ٹائم پیریڈ ہے یعنی یہ پاکستان بننے سے پہلے سے لیکر ۱۹۷۱ کے قریب قریب تک کے سارے وقت کا احاطہ کرتی ہے۔
    ۲۔ شہاب صاحب کی اپائنٹمنٹ ایسی رہی ہے کہ وہ کافی اچھے طریقے سے ہماری تاریخ کے اہم واقعات کا مشاہدہ کر سکے۔ ۳۔ شہاب صاحب کا اندازِ تحریر بھی کافی اچھا ہے۔ ۴۔ ایک بہت بڑا پلس پوائنٹ کشمیر کی تاریخ کو بہت تفصیل سے بیان کرنا ہے۔ جو کہ ڈوگرہ راج کے دور سے ۱۹۴۸ کی جنگ اور اس کے بعد تک کافی تفصیل سے بیان کی گئی ہے۔ ۵۔ اس کتاب کے واقعات کا تنوع بھی اس کی دلچسپی کو بڑھاتا ہے۔ یعنی کہاں ہماری تاریخ کا بیاں، کہاں جھنگ کے ڈی سی بننے کا احوال، پھر صدارتی محل اور بہت کچھ۔ یہ اس کتاب کا حسن ہے جو کہ اس کو ایک دلچسپ اور بڑی کتاب بناتا ہے۔ ۶۔ اسلامی سیکشن۔ اس کےآخر میں شہاب صاحب نے کافی ساری دعائیں اور وظائف بھی بتائے ہیں جو کہ ایک بہت اچھی بات ہے۔



    یہ تو تھے چند نکات جو میرے ذہن میں ہیں۔ اگر آپ کے ذہن میں بھی کوئی پوائنٹ ہو تو ضرور لکھئے۔
    اس کے بعد اگلی پوسٹ میں ناپسندیدہ پوائنٹس لکھوں گا
    (اے اللہ! میرے علم میں اضافہ فرما)۔
    میرا بلاگ: بے کار باتیں

  2. #2
    Section Managers

    Join Date
    Aug 2007
    Posts
    22,601
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    شہاب نامہ میری پسندیدہ کتاب ہے ۔اس میں انہوں نے پاکستان کے حالات بغیر کسی لگی لپٹی کے کھول کر بیان کیئے ہیں اور خود پر بھی کوئی پردہ نہیں رکھا ۔جس وقت جیسا سوچتے تھے لکھ دیا۔ مجھے تو ان کی ہر بات سچی ہی لگی ہے مطلب جھوٹ کے آمیزش سے پاک ۔
    بعض لوگ تصوف والے حصے پر اعتراض کرتے ہیں لیکن یہ باتیں تو صرف اس قسم کے انسان ہی جان سکتے ہیں ،ہم کوئی رائے نہیں دے سکتے ۔مجھے تو وہ ایک سچے ،کھرے اور بہت اچھے انسان لگے ہیں ۔

  3. #3
    Member

    Join Date
    Jan 2008
    Posts
    63
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    شہاب نامہ کا مصنف بنیادی طور پر ایک صوفی منش انسان نظر آتا ہے ۔۔ وہ واقعات سے جو نتائج اخذ کرتا ہے وہ اس کے صوفیانہ رنگ کا اظہار ہیں ۔
    پاکستان کے سیاسی حالات پر تبصرہ جات کے حوالے سے شاید اس پر کچھ اعتراضات ہو سکیں ۔
    لیکن اس کے مصنف نے اپنی سوانح حیات کو جس خوبصورت انداز میں بیان کیا ہے وہ بہت کم کتابوں کا خاصہ ہے
    اور اس کے حوالےسے سب سے دلچسپ بات یہ ہے کہ پاکستان میں ادبی اور پڑھے لکھے حلقوں میں سب سے زیادہ بکنے والی کتاب بھی یہی ہے ۔
    [SIGPIC][/SIGPIC]
    www.alqlm.org/library

  4. #4
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2007
    Posts
    5,331
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    شہاب نامہ مجھے پسند نہیں - خاص طور پر "بملا کماری کی روح" والا باب تو بالکل جھوٹ لگتا ہے - اس سے بہت بہتر ممتاز مفتی کا "علی پور کا ایلی" ہے لیکن ممتاز مفتی کی اسی کتاب کا دوسرا حصہ "ایلی اور الکھ نگری" شہاب نامہ کا دوسرا حصہ لگتا ہے کیونکہ اس میں شہاب صاحب، ممتاز مفتی کے دوست ہیں -
    کون ہوتا ہے حریفِ مئے مرد افگنِ عشق
    ہے مکرّر لبِ ساقی پہ صلا میرے بعد

    -- غالب

  5. #5
    Site Managers

    Join Date
    Jun 2007
    Location
    پاکستان
    Posts
    54,986
    Mentioned
    42 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    آپ سب کے تبصرے کا بہت شکریہ۔
    جیسا کہ میں نے ابتدائیے میں بھی لکھا تھا کہ مجھے بھی شہاب نامہ پسند نہیں ہے۔ اگرچہ کہ اس کے کچھ پلس پوائنٹس ضرور ہیں جن میں سے کچھ بیان کرنے کی کوشش کی تھی۔ اب کچھ تنقیدی پوائنٹس
    ۱۔ ایک تو یہ کہ قدرت اللہ شہاب صاحب نے شروع ہی میں کہا کہ میں دنیا کے بڑے بڑے سربراہان سے مل چکا ہوں لیکن کسی میں وہ شان و شوکت نظر نہ آئی، جو شاید کسی جھنگ کے فٹ پاتھ پہ بیٹھے موچی میں نظر آئی، بالکل درست بات ہے لیکن اس کتاب میں جتنی بھی تصویریں ہیں، وہ شہاب صاحب کی بڑی شخصیات کے ساتھ فوٹوز ہی ہیں۔ کیا یہ کھلا تضاد نہیں

    ۲۔ شہاب صاحب نے زیادہ وقت ایوب خان کے ساتھ گزارا اور اس کتاب میں اس سارے دور کے احوال میں ایوب خان پہ ہر طرح کی تنقید کی ہے۔ صرف آخری پیراگراف میں چند سطروں میں اس طرح کی بات لکھی ہے کہ ایسا نہیں کہ ان کے دور میں صرف خرابیاں ہی تھیں بلکہ کچھ اچھی باتیں بھی تھیں وغیرہ وغیرہ۔ جبکہ حقائق شاید بالکل ایسے بھی نہ تھے۔ پاکستان کی تاریخ میں حقیقی ترقی کا اگر کوئی دور تھا تو وہ ایوب خان کا ۱۹۶۵ سے پہلے کا دور ہی تھا جس کی بنا پہ اس وقت پاکستان کو ایشین ٹائیگر بھی کہا گیا۔

    ۳۔ ایک اور بات جو مجھے پڑھتے ہئے محسوس ہوئی کہ شہاب صاحب کی شاید اس وقت کے وزیرِ خزانہ ڈاکٹر شعیب سے کچھ بنتی نہیں تھی۔ اس لئے شہاب صاحب نے ڈاکٹر شعیب پہ تنقید کرنے کا کوئی موقع ہاتھ سے جانے نہیں دیا۔ حالانکہ شاید ڈاکٹر شعیب اتنے برے پروفیشنل بھی نہ تھے۔ پاکستان کی تاریخ میں اگر کبھی گروتھ ریٹ ۹ فیصد سے اوپر رہا ہے تو یہ صرف ڈاکٹر شعیب کی وزارت کے دنوں میں ہی تھا۔

    ۴۔ ایک اور بات جو مجھے بڑی عجیب سی لگی کہ انیس سو باسٹھ کی چین بھارت جنگ میں پاکستان کی طرف سے انڈیا پر حملہ نہ کرنے پہ ایوب خان حکومت پہ تنقید۔ شہاب صاحب کا خیال تھا کہ پاکستان کو کشمیر پہ قبضہ کر لینا چاہئے تھا۔ یہ تو جرنیلی ٹائپ کی سوچ ہے جس نے ہمیشہ ہمیں مروایا ہے۔ کارگل میں بھی یہی ہوا اور انیس سو پینسٹھ میں بھی یہی ہوا کہ ہم نے سمجھا کہ ہم جنگ کے متحمل ہو سکتے ہیں جبکہ مخالف ملک نہیں اور دونوں دفعہ ہمارا اندازہ غلط ثابت ہوا۔ تو اس طرح کی بات شہاب ساحب کی جذباتی سوچ تو ہو سکتی ہے لیکن اتنی بڑی کتاب میں اس بات کا تذکرہ عجیب سا لگا۔

    ۵۔ جیسا کہ فرخ بھائی نے بھی ذکر کیا، کتاب میں بہت سے واقعات صرف زیبِ داستاں کے لئے شامل ہوئے لگے جیسے بملا کماری کی روح وغیرہ

    تنقید کے علاوہ ایک اور بات کا ذکر کرنا چاہوں گا کہ شہاب نامہ میں تقریبا'' انیس سو اکہتر کے کچھ بعد تک کی تاریخ بیان کی گئی ہے۔ اس کو پڑھنے کے بعد اگر تہمینہ درانی کھر کی کتاب مینڈا سائیں یعنی مائی فیوڈل لارڈ پڑھی جائے تو خاصی اچھی سیکوینس بنتی ہے کیونکہ شہاب نامہ جس دور پہ ختم ہوتا ہے، مائی فیوڈل لارڈ تقریبا'' اسی دور کی تاریخ سے شروع ہوتی ہے اور نوے کی دہائی کے اوائل تک کی داستان بڑے اچھے طریقے سے بیان کرتی ہے۔
    (اے اللہ! میرے علم میں اضافہ فرما)۔
    میرا بلاگ: بے کار باتیں

  6. #6
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    25,159
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    os sub logon key leay jen ko SHAHAAB NAMAH key kuch hassy passend nahi hain.
    1) her insaan ki passend dosry sey balkul uleg hoty hey or her ak ka zave-a-nazer bhe balkul mukhtalef.
    2)Es baat ki choti se mesaal yah hey kah ak insaan ak Pahaar key balkul dermany rasty per ja raha hey or ak admi os ko pahaar ki choti sey khara dakh ker sochta hey kah yah admi mujh sey ketna "nechy" hey. Dosra admi pahaar key nachy khara hey or osi admi ko dakh ker kahtah hey kah yah mujh sey ketna "onchy " per hey. Halankah woh admi tu osi ak jagah per hey serf apny apny makaam per or apny apny point sey dakhny ki baat hey.
    3) ager app ko SHAAB NAMAH ko semjhny hey tu es key leay MUMTAZ MUFTI ko parhna or semjhna bohet zarory hey. Khaas tor per ALKH NAGRY by him.
    4) SHAAB SAHIB ki job asi the kah on ki all pics serf bary logon key sath he ho sakty thian konkah on ki zindage ka sara time on he logon key sath guzra tha. On ko es baat ka kahbi bhe mokah nahi mela ho ga kah woh AK "MOCHI" key pass jaty hoy khaas toor per ak CAMERA bhe sath ley jaty or or os key sath bath ker tasweer banaty.
    Main on ki bohet zadah "Madahh" hoon. sorry es leay zarory semjhty hoon kah es baat ka jawab doon.
    I don't want to hurt anyone's feeling but we all have RIGHT to say how we feel.

  7. #7
    Site Managers

    Join Date
    Jun 2007
    Location
    پاکستان
    Posts
    54,986
    Mentioned
    42 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    کوئی اور تبصرہ نہیں کرے گا کیا؟
    (اے اللہ! میرے علم میں اضافہ فرما)۔
    میرا بلاگ: بے کار باتیں

  8. #8
    Senior Member

    Join Date
    Dec 2007
    Posts
    157
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    اچھی کتاب ہے۔
    مگر بعض اوقات ایوب خان کی ضرورت سے زیادہ تعریف کی گئی ہے۔

    جس دن سے چلا ہوں میری منزل پہ نظر ہے


    http://www.oneurdu.com/forum/blog.php?u=11885


  9. #9
    Senior Member

    Join Date
    Jan 2007
    Posts
    4,687
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ


    میں نے تو کافی مہینوں سے یہ کتاب پڑھتے پڑھتے چھوڑی ہوئی ھے ، ڈیڑھ دو سو صفحات رہتے ہیں ، پڑھ کے ہی تبصرہ کرونگی لیکن بملا کماری والی روح والے واقعہ کو خارج از قیاس نہیں کیا جا سکتا کیونکہ میں نے ایسے اور بھی کئی واقعات پڑھے ہیں اور ویسے بھی اس دنیا میں ہر چیز کا امکان موجود ھے ۔

    ابھی تک راستے کے پیچ و خم سے دل دھڑکتا ھے
    میرا ذوقِ طلب شاید ابھی تک خام ھے ساقی

  10. #10
    rfi
    Guest

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    واقعی اچھی کتاب ہے۔میں نے او لیولز کے بعد ایک دن لائیبری کا رخ کیا تو وہاں اسے دیکھا اتنی بھاری بھرگم کتاب دیکھ کر پہلے تو ڈر گیا کہ ہیں یہ کیا۔ لیکن پھر ہمت کرکے پڑھناشروع کیا تو واقعی دلچسپی بڑھتی گئ اور میں نے ایک اپنی کاپی خرید کر اسے کافی ڈیٹل میں پڑھا۔

    مجھے سب سے شاندار طرز تحریر،مشاہدات کو بیان کرنا جوکہ خالصتا ذاتی تھے۔جیسے بملاکماری کی بےچین روح اور جھوٹے پیر وغیرہ کے قصے۔
    دوسری اہم چیز اس سے ہمیں پاکستان میں ٹاپ بیروکریسی کی تصویر نظرآتی ہے۔سکرٹریز وغیرہ کا رول اور سیاستدانوں کے ساتھ ان کاسلوک وغیرہ۔
    تیسری چیز وہ ہے تاریخ۔جس کے بہت سے اہم واقعات کو اس کتاب میں قید کیا گیا ہے۔واقعی شاندار کتاب ہے۔

  11. #11
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    25,159
    Mentioned
    1 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: شہاب نامہ پہ تبصرہ

    یہ میری پسندیدہ کتابوں میں سے ایک ھے۔ ٰیاز بھائی کے لئے کچھ پوائنٹس۔
    گوکہ یہ کچھ پواینٹس اس محنت کا بدلہ تو نھیں ھو سکتے مگر حقیر سا نزرانہ ھے اس کاوش کی نظر۔
    میں ھر وقت دوسروں کو پوائنٹ دیتی رھتی ھوں لیکن مجھے کوئی نھیں دیتا کیونکہ میں کمپوزنگ جو نھیں کرتی نا ۔ بڑے افسوس کی بات ھے۔ اسی لئے میرے ھر وقت کم سے کم رہتے جاتے ھیں۔

    "There is no market for emotions.
    So,
    Never advertise feelings,
    Just display attitude"

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •