Thanks Thanks:  1,301
Likes Likes:  419
Page 107 of 107 FirstFirst ... 75797105106107
Results 1,591 to 1,597 of 1597

Thread: قرآن فہمی، آئیے مل کر پڑھیں ترجمہ قرآن

  1. #1591
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    حق اور اہل حق کا مذاق اڑانا بدبختی اور ہلاکت
    وَيَصْنَعُ الْفُلْكَ ۣ وَكُلَّمَا مَرَّ عَلَيْهِ مَلَاٌ مِّنْ قَوْمِهٖ سَخِرُوْا مِنْهُ ۭقَالَ اِنْ تَسْخَرُوْا مِنَّا فَاِنَّا نَسْخَرُ مِنْكُمْ كَمَا تَسْخَرُوْنَ

    وَيَصْنَعُ
    : اور وہ بناتا تھا الْفُلْكَ : کشتی وَكُلَّمَا : اور جب بھی مَرَّ : گزرتے عَلَيْهِ : اس پر مَلَاٌ : سردار مِّنْ : سے (کے) قَوْمِهٖ : اس کی قوم سَخِرُوْا : وہ ہنستے مِنْهُ : اس سے (پر) قَالَ : اس نے کہا اِنْ : اگر تَسْخَرُوْا : تم ہنستے ہو مِنَّا : ہم سے (پر) فَاِنَّا : تو بیشک ہم نَسْخَرُ : ہنسیں گے مِنْكُمْ : تم سے (پر) كَمَا : جیسے تَسْخَرُوْنَ : تم ہنستے ہو

    اور نوح اس کشتی کے بنانے میں لگ گئے، تو ان کی قوم کے سرداروں میں سے کوئی ان کے پاس سے گزرتا تو ان کا مذاق اڑاتا، نوح کہتے کہ اگر تم ہمارا مذاق اڑاتے ہو تو ہم بھی اسی طرح تمہارا مذاق اڑائیں گے جس طرح کہ تم ہمارا مذاق اڑا رہے ہو۔۳۸


  2. #1592
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    دائمی عذاب
    فَسَوْفَ تَعْلَمُوْنَ ۙ مَنْ يَّاْتِيْهِ عَذَابٌ يُّخْزِيْهِ وَيَحِلُّ عَلَيْهِ عَذَابٌ مُّقِيْمٌ

    فَسَوْفَ : سو عنقریب تَعْلَمُوْنَ : تم جان لوگے مَنْ يَّاْتِيْهِ : کس پر آتا ہے عَذَابٌ : ایسا عذاب يُّخْزِيْهِ : اس کو رسوا کرے وَيَحِلُّ : اور اترتا ہے عَلَيْهِ : اس پر عَذَابٌ : عذاب مُّقِيْمٌ : دائمی

    سو عنقریب تم جان لو گے کہ کس کے پاس عذاب آتا ہے جو اس کو رسوا کر دے گا اور اس پر دائمی عذاب نازل ہوگا۔۳۹


  3. #1593
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    جوش مارا تنور نے
    حَتّٰٓي اِذَا جَاۗءَ اَمْرُنَا وَفَارَ التَّنُّوْرُ ۙ قُلْنَا احْمِلْ فِيْهَا مِنْ كُلٍّ زَوْجَيْنِ اثْنَيْنِ وَاَهْلَكَ اِلَّا مَنْ سَبَقَ عَلَيْهِ الْقَوْلُ وَمَنْ اٰمَنَ ۭ وَمَآ اٰمَنَ مَعَهٗٓ اِلَّا قَلِيْلٌ

    حَتّٰٓي
    : یہاں تک کہ اِذَا جَاۗءَ : جب آیا اَمْرُنَا : ہمارا حکم وَفَارَ : اور جوش مارا التَّنُّوْرُ : تنور قُلْنَا : ہم نے کہا احْمِلْ : چڑھا لے فِيْهَا : اس میں مِنْ : سے كُلٍّ زَوْجَيْنِ : ہر ایک جوڑا اثْنَيْنِ : دو (نرو مادہ) وَاَهْلَكَ : اور اپنے گھر والے اِلَّا : سوائے مَنْ : جو سَبَقَ : ہوچکا عَلَيْهِ : اس پر الْقَوْلُ : حکم وَمَنْ : اور جو اٰمَنَ : ایمان لایا وَمَآ : اور نہ اٰمَنَ : ایمان لائے مَعَهٗٓ : اس پر اِلَّا قَلِيْلٌ : مگر تھوڑے

    یہاں تک کہ جب ہمارا حکم آپہنچا اور تنور جوش مارنے لگا تو ہم نے نوح کو حکم دیا کہ ہر قسم (کے جانداروں) میں سےایک جوڑا دوعدد( نر مادہ) لے لو ااور اپنے گھر والوں کو بھی سوار کر لو سوائے اس کے جس کے بارے میں پہلے سے فیصلہ ہوچکا ہے۔ ( کہ وہ کفر کی وجہ سے غرق ہوں گے) اور ان لوگوں کو بھی سوار کرلو اور تھوڑے ہی لوگ تھے جو ان کے ساتھ ایمان لائے تھے۔۴۰


  4. #1594
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    اللہ ہی پر بھروسہ
    وَقَالَ ارْكَبُوْا فِيْهَا بِسْمِ اللّٰهِ مَجْــرٖ۩ىهَا وَمُرْسٰىهَا ۭ اِنَّ رَبِّيْ لَغَفُوْرٌ رَّحِيْمٌ

    وَقَالَ
    : اور اس نے کہا ارْكَبُوْا : سوار ہوجاؤ فِيْهَا : اس میں بِسْمِ اللّٰهِ : اللہ کے نام سے مَجْــرٖ۩ىهَا : اس کا چلنا وَمُرْسٰىهَا : اور اس کا ٹھہرنا اِنَّ : بیشک رَبِّيْ : میرا رب لَغَفُوْرٌ : البتہ بخشنے والا رَّحِيْمٌ : نہایت مہربان

    اور نوح نے کہا کہ اس میں سوار ہوجاؤ۔ اللہ کے نام سے ہے اس کا چلنا اور اس کا ٹھہرنا۔ بلاشبہ میرا رب بخشنے والا ہے نہایت مہربان ہے۔۴۱


  5. #1595
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    نوح علیہ السلام کے اپنے بیٹے کو پکارنا
    وَهِىَ تَجْرِيْ بِهِمْ فِيْ مَوْجٍ كَالْجِبَالِ ۣ وَنَادٰي نُوْحُۨ ابْنَهٗ وَكَانَ فِيْ مَعْزِلٍ يّٰبُنَيَّ ارْكَبْ مَّعَنَا وَلَا تَكُنْ مَّعَ الْكٰفِرِيْنَ

    وَهِىَ
    : اور وہ تَجْرِيْ : چلی بِهِمْ : ان کو لے کر فِيْ مَوْجٍ : لہروں میں كَالْجِبَالِ : پہاڑ جیسی وَنَادٰي : اور پکارا نُوْحُ : نوح ابْنَهٗ : اپنا بیٹا وَكَانَ : اور تھا فِيْ مَعْزِلٍ : کنارے میں يّٰبُنَيَّ : اے میرے بیٹے ارْكَبْ : سوار ہوجا مَّعَنَا : ہمارے ساتھ وَلَا تَكُنْ : اور نہ رہو مَّعَ الْكٰفِرِيْنَ : کافروں کے ساتھ

    اور وہ (کشتی) چلی جا رہی تھی ان سب کو لے کر پہاڑوں جیسی موجوں کے درمیان اور نوح نے اپنے بیٹے کو پکار کر کہا جب کہ وہ دور ایک کنارے پر تھا کہ اے میرے بیٹے سوار ہوجا تو ہمارے ساتھ (اس کشتی میں) اور مت ساتھ رہ تو ان کافروں کے۔۴۲


  6. #1596
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    پسر نوح کا اپنے باپ کو کافرانہ جواب
    قَالَ سَاٰوِيْٓ اِلٰي جَبَلٍ يَّعْصِمُنِيْ مِنَ الْمَاۗءِ ۭ قَالَ لَا عَاصِمَ الْيَوْمَ مِنْ اَمْرِ اللّٰهِ اِلَّا مَنْ رَّحِمَ ۚ وَحَالَ بَيْنَهُمَا الْمَوْجُ فَكَانَ مِنَ الْمُغْرَقِيْنَ

    قَالَ
    : اس نے کہا سَاٰوِيْٓ : میں جلد پناہ لے لیتا ہوں اِلٰي جَبَلٍ : کسی پہاڑ کی طرف يَّعْصِمُنِيْ : وہ بچالے گا مجھے مِنَ الْمَاۗءِ : پانی سے قَالَ : اس نے کہا لَا عَاصِمَ : کوئی بچانے والا نہیں الْيَوْمَ : آج مِنْ : سے اَمْرِ اللّٰهِ : اللہ کا حکم اِلَّا : سوائے مَنْ رَّحِمَ : جس پر وہ رحم کرے وَحَالَ : اور آگئی بَيْنَهُمَا : ان کے درمیان الْمَوْجُ : موج فَكَانَ : تو وہ ہوگیا مِنَ : سے الْمُغْرَقِيْنَ : ڈوبنے والے

    (نوح کے بیٹے) نے کہا س نے (نوح کے بیٹے) میں کسی پہاڑ پر پناہ لے لوں گا ، وہ مجھے پانی کی زد سے بچا لے گا نوح (علیہ السلام) نے کہا آج اللہ کی بات سے بچانے والا کوئی نہیں مگر ہاں وہی جس پر وہ رحم کرے اور دونوں کے درمیان ایک موج حائل ہوگئی پسوہ ہوگیا غرق ہونے والوں میں سے۔۴۳


  7. #1597
    Senior Member

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    2,043
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    وَمَا مِن دَابَّةٍ ۔ سورت ھود

    کشتی کا جودی پہاڑ پر ٹھہرنا
    وَقِيْلَ يٰٓاَرْضُ ابْلَعِيْ مَاۗءَكِ وَيٰسَمَاۗءُ اَقْلِعِيْ وَغِيْضَ الْمَاۗءُ وَقُضِيَ الْاَمْرُ وَاسْـتَوَتْ عَلَي الْجُوْدِيِّ وَقِيْلَ بُعْدًا لِّلْقَوْمِ الظّٰلِمِيْنَ

    وَقِيْلَ
    : اور کہا گیا يٰٓاَرْضُ : اے زمین ابْلَعِيْ : نگل لے مَاۗءَكِ : اپنا پانی وَيٰسَمَاۗءُ : اور اے آسمان اَقْلِعِيْ : تھم جا وَغِيْضَ : اور خشک کردیا گیا الْمَاۗءُ : پانی وَقُضِيَ : اور پورا ہوچکا (تمام ہوگیا) الْاَمْرُ : کام وَاسْـتَوَتْ : اور جا لگی عَلَي الْجُوْدِيِّ : جودی پہاڑ پر وَقِيْلَ : اور کہا گیا بُعْدًا : دوری لِّلْقَوْمِ : لوگوں کے لیے الظّٰلِمِيْنَ : ظالم (جمع)

    اور حکم دیا گیا کہ اے زمین اپنا پانی نگل جا اور اے آسمان تھم جا۔ تو پانی خشک ہوگیا اور کام تمام کردیا گیا اور کشی جودی پہاڑ پر جا ٹھہری۔ اور کہہ دیا گیا کہ دوری (لعنت) ہے ظالم قوم کے لئے۔۴۴


Tags for this Thread

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •