Thanks Thanks:  14
Likes Likes:  27
Page 180 of 214 FirstFirst ... 80130170178179180181182190 ... LastLast
Results 2,686 to 2,700 of 3198

Thread: لفظ "شہر" پر اشعار

  1. #2686
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    اپنے کو ہَم اس شہر میں رسوا نہ کریں گے
    اب تک جو ہوا خیر، اب ایسا نہ کریں گے
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  2. #2687
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    اس شہر میں آئندہ نہ دیکھیں گے وہ ہم کو
    کیا کیا نہ کیا عشق میں کیا کیا نہ کریں گے

    ابنِ انشا
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  3. #2688
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    یہ میرے شہر کا اک اور حادثہ ہوگا
    وہ کل یہاں مرا مہمان بن چکا ہوگا
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  4. #2689
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    شاہراہیں دفعتاً شعلے اگلنے لگ گئیں
    گھر کی جانب چل پڑا ہے شہر گھبرا کر تمام


    صبح کے سارے اجالے راستوں میں کھو گئے
    شب کے اندھیاروں میں گم ہیں شام کے منظر تمام
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  5. #2690
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    اب کہاں وہ لوگ وہ رونق وہ نغمے وہ فضا
    شہر کی گلیاں ہیں سونی سونے بام و در تمام
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  6. #2691
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    گیتوں کا شہر ہے کہ نگر سوز و ساز کا
    قلب شکستہ اور یہ عالم گداز کا
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  7. #2692
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    عابدؔ تمام شہر پہ عالم ہے کون سا
    ہر ایک شکل نقش بہ دیوار سی لگے
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  8. #2693
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    44,587
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    شہرِ وفا کی ساری کرنیں پھوٹ رھی تھین ماتھے پر
    مقتل میں اس نووارد کا چہرہ دیکھنے والا تھا
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  9. #2694
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    44,587
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    میری آنکھوں میں تو پھیلا ھے بیاباں کا غبار
    لوگ کیوں شہر سے بادیدۂ نم آتے ھیں
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  10. #2695
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    44,587
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    یہ شہر و کوہ و بیابان و دشت و دریا تھے
    اب آگے خواب ہے رک جائیے بسر کیجے
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  11. #2696
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    یوں بھی ہوا کہ شہر کی سڑکوں پہ بارہا
    ہر شخص سے میں اپنا پتہ پوچھتا پھرا
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  12. #2697
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    آزرؔ یہ کس کی سمت بڑھے جا رہے ہیں لوگ
    اس شہر میں تو میرے سوا کوئی بھی نہ تھا
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  13. #2698
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    وہ جس کی خاطر ہمارے آبا نے کی تھی ہجرت
    میں اپنے شہروں میں اُس مدینے کو ڈھونڈتا ہوں
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  14. #2699
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    پھر شبِ ہجر مرے شہر پہ ہے سایہ فگن
    آج پھر چاہیے اِس کو کسی بے باک سے خون
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  15. #2700
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    73,457
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    4 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    مری محرومیاں جب پتھروں کے شہر سے گزریں
    چھپایا سر تری یادوں کے ٹوٹے سائبانوں میں
    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


Tags for this Thread

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •