Thanks Thanks:  1
Likes Likes:  4
Page 2 of 12 FirstFirst 1234 ... LastLast
Results 16 to 30 of 172

Thread: حرف "ظ" سے شروع ہونے والے اشعار

  1. #16
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلم سے سہمی ہوئی، دکھ سے مگر دہکی ہوئی
    ایسی آنکھوں ہی سے طوفان اُٹھا کرتے ہیں
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  2. #17
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظاہر کی آنکھ سے نظر آتا نہیں مجھے
    لیکن حضور محوِ تماشا تو میں بھی ہوں
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  3. #18
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ﻇﺎﮨﺮ ﮐﯽ ﺁﻧﮑﮫ ﺳﮯ ﻧﮧ ﺗﻤﺎﺷﺎ ﮐﺮﮮ ﮐﻮﺋﯽ
    ﮨﻮ ﺩﯾﮑﮭﻨﺎ ﺗﻮ ﺩﯾﺪۂ ﺩﻝ ﻭﺍ ﮐﺮﮮ ﮐﻮﺋﯽ
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  4. #19
    Senior Member

    Join Date
    Feb 2007
    Posts
    2,123
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    ظاہر ہے کہ گھبرا کے نہ بھاگینگے نکیرین
    ہاں منہ سے مگر بادہء دوشینہ کی بو آئے
    قوت عشق سے ہر پست کو بالا کردے
    دہر میں اسم محمد سے اجالا کردے

  5. #20
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلمتِ شب سے شکایت اُنہیں کیسی محسنؔ
    وہ تو سُورج کو تھے آئینہ دکھانے والے


    محسن نقوی
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  6. #21
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظہور ہوتے ہوۓ حرف کی طرح وه دِیا
    حریم ِشامِ اذیت میں مُعتکِف ہوا تھا
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  7. #22
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    69,455
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    2 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    ظلم یہ ہے کہ یکتا تیری بیگانہ روی
    لطف یہ ہے کہ میں اب تک تجھے اپنا سمجھوں

    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  8. #23
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلمتِ شب میں سدا خواب ھی دیکھوں جس کے
    مجھ سے ملتا ھی نہیں ھے وہ سویرا مولا


    خادم رزمی

    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  9. #24
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    69,455
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    2 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    ظفر اب تو اشارے بھی بہت دینے لگے کام
    یہی میری زباں ہے بے زبانی کے بجائے

    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  10. #25
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    69,455
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    2 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    ظلم کے پاؤں سے جو پھول مسل جاتے ہیں
    قہر بن کر وہی پتھر پہ نکل آتے ہیں

    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  11. #26
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلمت کدے میں میرے شبِ غم کا جوش ہے
    اک شمع ہے دلیلِ سحر، سو وہ خاموش ہے


    مرزا غالب
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  12. #27
    Senior Member Pardaisi's Avatar

    Join Date
    Sep 2007
    Posts
    69,455
    Blog Entries
    32
    Mentioned
    2 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)
    ظلم سے ہم ڈر گئے یہ تم سے کس نے کہہ دیا
    ظلم قانوناً روا ہو جائے تو ہم کیا کریں

    کوئی مجبوریاں نہیں ہوتیں
    لوگ یونہی وفا نہیں کرتے


  13. #28
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظالم تھا وہ اور ظلم کی عادت بھی بہت تھی
    مجبور تھے ہم اس سے محبت بھی بہت تھی


    کلیم عاجز
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  14. #29
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلمتِ شب میں اُجالوں کی تمنا نہ کرو​
    خواب دیکھا ہے تو اب خواب کو رسوا نہ کرو​


    کامران نجمی
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



  15. #30
    Sisters Society Rose's Avatar

    Join Date
    Feb 2008
    Location
    Karachi
    Posts
    42,020
    Blog Entries
    27
    Mentioned
    15 Post(s)
    Tagged
    3 Thread(s)
    ظلم کے پاؤں سے جو پھول مسل جاتے ہیں
    خار بن کے وہی پتھر پہ نکل آتے ہیں
    اپنی آنکھوں کو قناعت کی طرف لا اے شخص
    اس سے پہلے کہ کوئی خواب بڑا ہو جائے



Page 2 of 12 FirstFirst 1234 ... LastLast

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •