Thanks Thanks:  0
Likes Likes:  0
Results 1 to 3 of 3

Thread: زیور بیچتے پر ٹانکا کٹنا

  1. #1
    Durre Nayab
    Guest

    زیور بیچتے پر ٹانکا کٹنا

    میں نے اکثر دیکھا ہے کہ امی جب بھی پرانا زیور دے کر کچھ نیا بنوانے جاتی ہے تو واپس آکر یہ کہتی ہے ارے اتنے پیسے ٹانکے کےکاٹ لئے کچھ ہاتھ نہ آیا۔ اس کے بارے میں کچھ تفصیل سے بتائیں گے اور یہ بھی بتائیں کہ آجکل بغیر ٹانکوں والے زیور بھی ملتے ہیں تو یہ کیسے بنتے ہیں؟،

  2. #2
    Senior Member

    Join Date
    Sep 2008
    Posts
    215
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: زیور بیچتے پر ٹانکا کٹنا

    Quote Originally Posted by Durre Nayab View Post
    میں نے اکثر دیکھا ہے کہ امی جب بھی پرانا زیور دے کر کچھ نیا بنوانے جاتی ہے تو واپس آکر یہ کہتی ہے ارے اتنے پیسے ٹانکے کےکاٹ لئے کچھ ہاتھ نہ آیا۔ اس کے بارے میں کچھ تفصیل سے بتائیں گے اور یہ بھی بتائیں کہ آجکل بغیر ٹانکوں والے زیور بھی ملتے ہیں تو یہ کیسے بنتے ہیں؟،
    عام طور پر پرانا زیور بیچا جائے یا نئے زیور سے تبدیل کیا جائے تو 25 سے 35 فیصد تک نقصان ہوتا ہے آپ نے زیور پر بنوائی اور ویسٹج دی ہوتی ہے وہ واپس نہیں ملتی پھر پرانا زیور خریدنے پر دوکاندار کا بھی منافع ہوتا ہے
    پہلے سونے کے زیور پر کسی اور دھات کا ٹانکہ لگایا جاتا تھا اور ٹانکہ پرانا ہونے پر کالا ہو جاتا تھا اب سونے میں
    KDM
    ملا کر سونے کا ہی ٹانکہ لگایا جاتا ہے پہلے ویسٹج کم لی جاتی تھی اب زیادہ
    پرانے زیور کو بیچتے وقت دونوں صورتوں میں تقریباً برابر ہی نقصان ہوتا ہے

  3. #3
    Senior Member

    Join Date
    Mar 2009
    Location
    اسلام آباد
    Posts
    3,763
    Blog Entries
    4
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: زیور بیچتے پر ٹانکا کٹنا

    Quote Originally Posted by Durre Nayab View Post
    میں نے اکثر دیکھا ہے کہ امی جب بھی پرانا زیور دے کر کچھ نیا بنوانے جاتی ہے تو واپس آکر یہ کہتی ہے ارے اتنے پیسے ٹانکے کےکاٹ لئے کچھ ہاتھ نہ آیا۔ اس کے بارے میں کچھ تفصیل سے بتائیں گے اور یہ بھی بتائیں کہ آجکل بغیر ٹانکوں والے زیور بھی ملتے ہیں تو یہ کیسے بنتے ہیں؟،
    ہاتھ کے بنے ہوئے زیورات میں جو ٹانکہ لگایا جاتا ہے اس میں نصف سونا اور باقی نصف تین دھاتیں ،چاندی، جست اور تانبہ ہوتا ہے ان کا خصوصاً جست کا نقطہ پگھلاؤ سونے کی نسبت کم ہوتا ہے جس کی بنا پر انہیں ٹانکے میں استعمال کیا جاتا ہے۔ اگر کسی زیور میں ایک گرام ٹانکہ لگا ہو تو اس میں آدھا گرام سونا اور آدھا گرام دوسری دھاتیں ہوتی ہیں اس لیے زیور کی واپسی پر ٹانکے کی وجہ سے کاٹ لی جاتی ہے
    ٹانکے کی مقدار سنار حضرات کی مرضی پر ہے جتنا ٹانکہ زیادہ ہوگا اتنا بنواتے وقت اور تڑواتے وقت فائدہ سنار کو ہوتا ہے۔
    بغیر ٹانکے والے زیورات مشین پر بنتے ہیں جنہیں کاسٹنگ زیورات کہتے ہیں ۔ ان میں ضرور بالضرور ملاوٹ ہوتی ہے۔ کیونکہ خالص سونا نرم ہوتا ہے اور کاسٹنگ کے زیورات پر باریک اور نازک کام ہوتا اس لیے زیور میں سختی اور پائداری لانے کےلیے ملاوٹ ناگزیر ہوتی ہے اب یہ سنار کی مرضی ہے کہ وہ ملاوٹ کتنی گاہک کو کاٹ کر دیتا ہے
    مجھے ان لوگوں پر بہت حیرت ہوتی ہے جو دین کے متعلق محض اندازے سے بات کرتے ہیں۔
    امام اعظم رضی اللہ عنہ

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •