Thanks Thanks:  1
Likes Likes:  8
Page 1 of 25 12311 ... LastLast
Results 1 to 15 of 374

Thread: موضوع: "پتھر" پر اشعار

  1. #1
    Senior Member

    Join Date
    Jan 2008
    Posts
    29,003
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    موضوع: "پتھر" پر اشعار

    اشعار محبت کی ذبان ھوتی ھے،کہتے ھیں محبت کرنے والوں کو دنیا پتھروں سے مارتی ھے اس لئے شاعروں نے اشعار میں پتھروں کو خوبصورتی سے استعمال کیا ھے، اس ٹاپک میں لفظ پتھر کے اشعار لکھنے ھیں۔ پہلا شعر میں لکھتا ھو۔


    کس کوپتھر ماریں ناصر کون پرایا ھے
    شیش محل کا اک اک چہرہ اپنا لگتا ھے


  2. #2
    Senior Member

    Join Date
    Jan 2008
    Posts
    29,003
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    انہیں پتھروں پہ چل کے تم آ سکو تو آؤ
    میرے گھر کے راستے میں کوئی کہکشاں نہیں ھے

    وہ چارہ گر مرے زخموں کو چھیڑنے والا
    دوا کو چھوڑ کے دینے لگا دعائیں مجھے

  3. #3
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    میرا دل پتھر کی طرح مضبوط تھا
    اس ایک ٹھوکر سے ریت کی طرح بکھر گیا
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  4. #4
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    اے خدا ریت کے صحرا کو سمندر کر دے
    یا چھلکتی آنکھوں کو بھی پتھر کر دے
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  5. #5
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    آنکھیں پتھر ہو جائینگی
    خوابوں سے مت کھیلا کر
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  6. #6
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    جانتا ہوں ایک ایسے شخص کو میں بھی منیر
    غم سے پتھر ہو گیا لیکن کبھی رویا نہیں
    [
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  7. #7
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    16,115
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    patthar ke Khudaa patthar ke sanam patthar ke hii insaaN paaye hain
    tum shahar-e-mohabbat kahate ho ham jaan bachchaakar aaye hain

  8. #8
    Senior Member

    Join Date
    Jan 2008
    Posts
    29,003
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    مندر کو جا رھی ھے وہ اک طشتری لئے
    اور طشتری میں جلتے دیوں کی بہار ھے
    اے پتھروں کو پوجنے والی حسین کرن
    رستے میں ایک تیرا عبادت گزار ھے

    وہ چارہ گر مرے زخموں کو چھیڑنے والا
    دوا کو چھوڑ کے دینے لگا دعائیں مجھے

  9. #9
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    جن پتھروں کو سکھایا تھا بولنا
    بولنے یہ آئے تو ہمی پر برس پڑے
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  10. #10
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    وہ تو پتھر ہیں جو گر جاتے ہیں ٹکڑے ہو کر
    حوصلے بھی کبھی مسمار ہوا کرتے ہیں
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  11. #11
    Senior Member

    Join Date
    Aug 2008
    Posts
    2,220
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    نازک تھا دل تو پھول کی پتی سے بھی
    دنیا کے حادثات نے پتھر بنا دیا
    چل اس کے شہر کی طرف یہ دل اگر اداس ھے

  12. #12
    Site Managers

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    52,406
    Blog Entries
    3
    Mentioned
    16 Post(s)
    Tagged
    1 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    ابابیلوں کا کوئی ڈر نہیں ہے
    اٹھا کر لائے ہیں پتھر یار میرے


    میں کس منہ سے کروں تعریف محسن
    ہیں سارے دوست دینا دار میرے


    محسن احسان

    ***

    گفتگو کرنے کا کچھ اُس میں ہُنر ایسا تھا
    وہ مری بات کا مفہوم بدل دیتا تھا
    ***

  13. #13
    Site Managers

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    52,406
    Blog Entries
    3
    Mentioned
    16 Post(s)
    Tagged
    1 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    Quote Originally Posted by ماہا زوہیب View Post
    جن پتھروں کو سکھایا تھا بولنا


    بولنے یہ آئے تو ہمی پر برس پڑے


    ماھا یہ شعر کچھ یوں ہے کہ

    جن پتھروں کو ہم نے عطا کی تھیں دھڑکنیں
    ان کو زباں ملی تو ہمی پر برس پڑے

    ***

    گفتگو کرنے کا کچھ اُس میں ہُنر ایسا تھا
    وہ مری بات کا مفہوم بدل دیتا تھا
    ***

  14. #14
    Site Managers

    Join Date
    Apr 2008
    Posts
    52,406
    Blog Entries
    3
    Mentioned
    16 Post(s)
    Tagged
    1 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار


    اپنی حیرت کے سوا،اپنے تاسف کے سوا
    ایک پتھر بھی مجھے آئینہ خانے میں ملا

    ***

    گفتگو کرنے کا کچھ اُس میں ہُنر ایسا تھا
    وہ مری بات کا مفہوم بدل دیتا تھا
    ***

  15. #15
    Senior Member

    Join Date
    Oct 2008
    Posts
    1,612
    Mentioned
    0 Post(s)
    Tagged
    0 Thread(s)

    Re: لفظ پتھر کے اشعار

    پتھر ہی لگیں گے ہر سمت سے آ کر
    یہ جھوٹ کی دنیا ہے یہاں سچ نہ کہا کر

Page 1 of 25 12311 ... LastLast

Bookmarks

Posting Permissions

  • You may not post new threads
  • You may not post replies
  • You may not post attachments
  • You may not edit your posts
  •