View RSS Feed

Barvi

حبیب خدا کا نظارہ

Rate this Entry
حبیبِ خدا کا نظارا کروں میں
دل و جان ان پر نثارا کروں میں

تری کفش پا یوں سنوارا کروں میں
کہ پلکوں سے اپنی بُہارا کروں میں

ترے نام پہ سر کو قربان کر کے
ترے سر سے صدقے اتارا کروں میں

یہ اک جان کیا ہے اگر ہوں کروڑوں
ترے نام پر سب کو وارا کروں میں

مرا دین ایمان فرشتے جو پوچھیں
تمہاری ہی جانب اشارا کروں میں

خدا خیر سے لائے وہ دن بھی نوری
مدینے کی گلیاں بہارا کروں میں

صلی اللہ علیہ وسلم


(مفتیٔ اعظم ہند: مفتی مصطفٰے رضا خان نوری رحمۃاللہ علیہ

Submit "حبیب خدا کا نظارہ" to Digg Submit "حبیب خدا کا نظارہ" to del.icio.us Submit "حبیب خدا کا نظارہ" to StumbleUpon Submit "حبیب خدا کا نظارہ" to Google

Categories
حمد و نعت

Comments

  1. Rubab's Avatar
    بہت خوب۔ جزاک اللہ۔
  2. Rose's Avatar
    .... جزاک اللہ۔
  3. Kauser Baig's Avatar
    صلی اللہ علیہ وسلم

    سبحان اللہ