Sabih

مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا

Rate this Entry


السلام علیکم
(انتخاب)
کسی غم گسار کی محنتوں کا یہ خوب میں نے صلہ دیا
کہ جو میرے غم میں گھلا کیا اسے میں نے دل سے بھلا دیا

جو جمال روئے حیات تھا جو دلیلِ راہِ نجات تھا
اسی راہ بر کے نقوشِ پا کو مسافروں نے مٹا دیا

ترے حسن خلق کی اک جھلک میری زندگی میں نہ مل سکی
میں اسی میں خوش ہوں کہ شہر کے در و بام کو تو سجا دیا

ترا نقشِ پا جو تھا راہنما تو غبارِ راہ تھی کاہ کشاں
اسے کھو دیا تو زمانے بھر نے ہمیں نظر سے گرا دیا

تیرے ثور و بدر کے باب کو میں ورق پلٹ کے گزر گیا
مجھے صرف تیری حکایتوں کی روایتوں نے مزہ دیا

یہ میری عقیدتِ بے بصر یہ میری ریاضتِ بے ہنر
مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا

میں تیرے مزار کی جالیوں ہی کی مدحتوں میں مگن رہا
تیرے دشمنوں نے تیرے چمن میں خزاں کا جال بچھا دیا

کبھی اے عنایتِ کم نظر تیرے دل میں یہ بھی ہوئی کسک
جو تبسمِ رخِ زیست تھا اسے تیرے غم نے رلا دیا

Submit "مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا" to Digg Submit "مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا" to del.icio.us Submit "مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا" to StumbleUpon Submit "مجھے میرے دعوائے عشق نے نہ صنم دیا نہ خدا دیا" to Google

Categories
Uncategorized

Comments

  1. 1UM-TeamUrdu's Avatar
    واہ بہت خوب ۔ رواں اور بامعنی ۔ بہت داد ۔ سدا سلامت رھیے
  2. Rubab's Avatar
    وعلیکم السلام
    بہت خوب صبیح بھائی
  3. Sabih's Avatar
    Quote Originally Posted by 1UM-TeamUrdu
    واہ بہت خوب ۔ رواں اور بامعنی ۔ بہت داد ۔ سدا سلامت رھیے
    السلام علیکم
    ٹیم بھائی یہ انتخاب ہے.
    میں تو شاید چند لفظ بھی اس پائے کے نہ لکھ پاتا.
    افسوس کہ مجھے شاعر کا نام نہیں مل سکا.
  4. Kainat's Avatar
    وعلیکم السلام
    بہت خوبصورت نعت
  5. Rose's Avatar
    • بہت خوب صبیح بھائی




  6. Shiny Eyes's Avatar
    SUBHAN ALLAH bohat umdaaa naat