PDA

View Full Version : مسواک کی اہمیت



محمد فیصل
09-07-2014, 02:22 PM
بخاری، مسلم، ترمذی وغیرہ کی اکیس مختلف احا دیث کا خلاصہ ہے کہ نبیﷺ ہر وضو میں، کہیں باہر سے گھر آنے کے بعد، رات کو سونے سے پہلے اور بیدار ہونے کے فوراََ بعد مسواک ضرور کرتے اور فرماتے: ” اگر مجھے امت کی مشکل کا خیال نہ ہوتا تو میں انھیں ہرنمازسے پہلے، ہر وضو کے ساتھ مسواک کا حکم ضرور دیتا ۔“ (بخاری،ح:۴۳۹۱)۔

ایک اور حدیث ہے: ”مسواک کرکے پڑھی جانے والی نماز کا ثواب اسکے بغیر پڑھی جانے والی نماز سے ستّرگنا زیادہ ہے۔“ (مُسْتَدْ رَکْ حاکم،ح: ۷۲۵)۔


حضرت ابو ایوب انصاری رضی اللہ تعالیٰ عنہ نے کہا کہ رسول اللہ صلی اللہ تعالیٰ علیہ واٰلہ وسلم نے فرمایاچارچیزیں نبیوں کی سُنّت میں داخل ہیں:نکاح،مسواک،حیا،خوشبو لگانا

مسواک درخت کی پتلی پتلی ٹہنیوں کو کاٹ کر اسکا سِرا تھوڑا سا چھیل کر بنائی جاتی ہے۔ اگراسے گیلا کر کے چبائیں،تو ٹوتھ برش کے سے ریشے نکل آتے ہیں۔ نبی ﷺ زیادہ تر پیلو کی مسواک استعمال فرماتے تھے


مسواک سنّت ہے اس میں بہت فائدے ہیں دانتوں کو مضبوط کرتی ہے مسوڑھوں کو فائدہ مند ہے منہ کو صاف کرتی ہے گندہ د ہنی کی بیماری کو فائدہ مند ہے معدہ درست کرتی ہے یعنی ہضم کرتی ہے آنکھوں کی روشنی بڑھاتی ہے زبان میں قوت پیدا کرتی ہے دانتوں کو صاف رکھتی ہے جانکنی کو آسان کرتی ہے، بلغم کو کاٹتی ہے، پِت دور کرتی ہے سَر کی رگوں کو مضبوط کرتی ہے موت کے وقت کلمہ یاد دلاتی ہے

آج سارے مغرب میں اسکا نام ہی دانتوں کے برش کا پودا پڑ گیا ہے۔ دانتوں کی مضبوطی کیلئے اسکے فوائد پر مغرب میں تحقیقات پر تحقیقات ہور ہی ہیں۔اوران تحقیقی مقالوں میں اسکا نام مسواک ہی لکھا جا رہا ہے کہ قدیم عربوں کی یہ دریافت، دانتوں کیلئے غیر معمولی مفید ہے۔ اسکے فوائد پر انٹرنیٹ کی باقائدہ کئی ویب سائٹس بنائی گئی ہیں