PDA

View Full Version : پانچ سو پوائنٹس کا سوال



وقار عظیم
04-09-2012, 09:20 PM
السلام علیکم
لو جی ابھی ایک مقابلہ ختم نہیں ہوا کہ ہم آ پہنچے دوسرے مقابلے کے ساتھ
اجی مقابلہ کیا ہے ہم کہیں یہ تو ایک سوال ہے جو پہلے جواب دے گیا پانچ سو پوائنٹس پا گیا
ایک شعر ہے جو کہ عوام میں کچھ یوں گردش کرتا ہے

مکتبِ عشق کے دستور نرالے دیکھے
اس کو چھٹی نہ ملی جس نے سبق یاد کیا

یہ غلط ہے

میر طاہر کے اس شعر میں جو جو غلطیاں ہیں وہ اوپر سرخ کر دیں ہیں اب اصل شعر بھی دیکھ لیں

مکتبِ عشق کا دستور نرالا دیکھا
اس کو چھٹی نہ ملے جس کو سبق یاد رہے

اب سوال کیا ہے؟
ماشاء اللہ اوور سیز بہت سے اراکین ہیں انگلش سب کو خوب آتی ہے اور میں تو ہوں ہی سدا کا انگلش میں کمزور ۔۔ابھی پرسوں ہی فیصل کو باہر جاتا دیکھ کہا
پلیز فیصل شٹ اپ دا ڈور
Faisal! Please Shut Up the Door
یہ الگ بات ہے یہ سب میں نے حاضرینِ محفل کو لوٹ پوٹ کرنے کو بولا تھا


انگلش کا ایک محاورہ ہے جو اس شعر کے معنی یا تشریح پر سو فیصد فٹ بیٹھا ہے سو فیصد معنی سو فیصد
آپ نے وہ محارہ جو کہ انگلش میں ہے وہ بتانا ہے اور یہیں بتانا ہے سب کے پاس ایک ایک چانس ہے جس نے پہلے بتا دیا وہ جیت گیا

وقار عظیم
04-09-2012, 11:23 PM
ویسے اب نے ابھی غور کیا وہ محاورہ اس شعر کی دوسری لائن کور کرتا ہے

Noor-ul-Ain Sahira
05-09-2012, 07:12 AM
ارے میرے بھائی ۔انگریز تو عشق وشق کرتے نہیں وہ اس محاورے کی انگریجی کیتھوں کریں گے جی؟

وقار عظیم
05-09-2012, 08:10 AM
ارے میرے بھائی ۔انگریز تو عشق وشق کرتے نہیں وہ اس محاورے کی انگریجی کیتھوں کریں گے جی؟


ارے میں نے یہ نہیں کہا کہ محاورہ انھوں نے شعر دیکھ کر بنایا
یہ اتفاقا ایسی بات ہے کہ وہ محاورہ اس شعر کی دوسری لائن پر مبنی ہے اور انگریزوں کے عشق کے متعلق
رومیو جیولیٹ نہیں پڑھی؟؟؟

وقار عظیم
06-09-2012, 03:24 AM
سب نے ہمت ہار دی

چلیں میں بتاتا ہوں
انیس سو ننانوے میں کیڈٹ کالج حسن ابدال کے انٹری ٹیسٹ میں یہ سوال ہمیں آیا تھا اور اس کے ساتھ بہت سے سوال تھے جن کی تیاری ہمیں پہلے کروا دی گئی تھی

اس کو چھٹی نہ ملے جس کو سبق یاد رہے
A Faithful Horse is always overloaded

اب بونس معلومات۔۔یہ بھی اسی ایگزامز میں تھے اور انٹری ٹیسٹ آٹھویں کلاس کے داخلے کا تھا یاد رہے حسن ابدال پاکستان کا نمبر ون کیڈٹ کالج ہے

چشمہ موسمِ بہار میں سپرنگ کی طرح اچھلتا ہے
The Spring Springs like a Spring in the Spring

میں نے ایک آرا دیکھا جو نہیں چیر سکتا تھا
I Saw a Saw which could not Saw

وہ گیا گیا
He Went to Gaya
گیا ایک ملک کا نام ہے

اس نے مالٹا میں سنگترہ کھایا
He ate Orange in Malta
مالٹا ایک ملک کا نام ہے

آسمان سے گرا کھجور میں اٹکا
Out of Frying pan in to the fire

بس یہی یاد ہیں جو جو ایگزام میں آئے تھے
آخر تیرہ سال گزر گئے۔۔ویسے ایگزام میں پچاس فقرے تھے