PDA

View Full Version : فریب آرزو از کائینات2



HarfeDua
06-10-2010, 06:33 PM
ہمیشہ کی طرح superb۔۔۔ افسانہ اور اس کا میسج تو اچھا ہے ہی لیکن ٹائٹل بھی بہت اچھا ہے۔ اور ڈیزائننگ بھی۔

1US-Writers
07-10-2010, 03:13 PM
http://i53.tinypic.com/2m3l0g6.jpg
http://i53.tinypic.com/2epomj7.jpg
مرکزی خیال ماخوذ

جیا آپی
07-10-2010, 04:26 PM
کائنات نے اپنے روائتی انذاد سے ھٹ کر لکھا ہے، مگر پھر بھی کہیں کہیں انھوں نے مزاح کا رنگ بھی نمایاں رکھا ہے جو کہ بہت بھلا لگ رہا ہے، مجھے تو اچھا لگا ۔خاص طور گھر کا پس منظر جس طرح بیان کیا گیا ہے۔ اللہ کرے ایسے ہی زور قلم زیادہ ہو ۔۔۔بس اینڈ تھوڑا جلدی ہوگیا۔

روشنی
07-10-2010, 04:32 PM
بہت اچھا لکھا ہے کائنات۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

آنکھیں کیسے چار ہوئی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ہاہاہا۔-------------

Kainat
07-10-2010, 04:49 PM
فریب آرزو




سورج کی کرنیں کھڑکی کے شیشے سے گزر کر اندر پہنچ رہی تھیں۔ پردہ آدھا ہٹا ہوا تھا، سو جیسے ہی دھوپ اشعر کے چہرے پر پڑنے لگی۔ تو وہ نیند میں ہی کسمسانے لگا۔ پہلے بے اختیاری میں ایک کروٹ ادھر لی۔ پھر دوسری طرف۔ مگر ایسا کرتے کرتے وہ نیند سے بیداری کے عالم میں آنے لگا۔ سائیڈ کی طرف دیوار پر لگے کلاک پر نیم باز آنکھوں سے وقت دیکھنا چاہا۔



" اونہوں، صبح تو کب کی ہو چکی۔ "

چڑیاں بھی کب کی چہچہا چکیں۔ یوگا کرنے والے بھی فارغ ہو چکے۔ اب کیا، کیا جا سکتا ہے۔ وہ بیزاری سے سوچنے لگا، ویک اینڈ کا تو ہمیشہ شدت سے انتظار ہوتا ہے۔ کل اس نے گروسری بھی کر لی تھی۔ لانڈری بھی، بلکہ آصف کے ساتھ جا کر فلم بھی شام کے شو میں دیکھی تھی۔ کھانا بھی باہر کھایا تھا۔ کافی بھاگ دوڑ رہی تھی۔ مگر وقت بہت اچھا گزرا تھا۔



آج اتوار تھا۔۔۔ چھٹی کا دن کوئی مصروفیت، کام بھی نظر نہیں آ رہا تھا۔ طبیعت پرابھی بیداری کی سستی چھائی ہوئی تھی۔

" سنڈے کے دن تو ویسے بھی لگتا ہے زندگی جام ہو گئی۔ شاپس بند، روڈ پر ٹریفک نہیں۔ پتہ نہیں لوگ کہاں چلے جاتے ہیں یا گھروں میں چھپ کر بیٹھ جاتے ہیں۔ اور پھر ٹی وی ۔۔۔ ٹی وی" وہ بڑبڑایا اور یہی سوچتے سوچتے بیڈ سے نکل آیا۔



سب سے پہلے جا کر اپنے لیے ایک مگ کافی تیار کی۔ گیٹ پر جا کر سنڈے کا خاص نیوز پیپراٹھا لایا۔ اور بالکونی میں جا کر کافی پیتے ہوئے نیوز پیپر پڑھنے لگا۔

" ایک آدمی نے پل سے کود کر خود کشی کرنا چاہی، لکین شومئی قسمت سے وہ بچ گیا۔ اسے پل سے کودتے دیکھ کر کسی نے پولیس کو فون کر دیا۔ "وہ بآواز بلند یہ خبر پڑھ رہا تھا " پولیس نے آ کر اس آدمی کو اس وقت گرفتار کر لیا، جب وہ خودکشی کی دوسری کوشش کے لیے دوبارہ پل پر چڑھ رہا تھا۔ "

" ہونہہ، جان کیا اتنی سستی ہے کہ اسے ایسے مفت میں دے دیا جائے۔ اور وہ بھی دو دو بار "

تھوڑی دیر بعد کافی بھی ختم ہو چکی تھی اور اخبار کی سرخیاں بھی دیکھی جا چکیں۔ تو چمکتی دھوپ دیکھ کراسے ایک نادر خیال آیا، کیوں نہ آج اپنی سیوا کی جائے یہ سوچ کر اندر سے زیتون کا آئل اٹھا لایا اورتھوڑا تھوڑا بالوں میں ڈال کر لگا اپنے ہی ہاتھوں سے بالوں میں چمپئی کرنے۔



واہ، ماں جی کتنے پیار سے اسکے بالوں میں مالش کیا کرتی تھیں اور ساتھ ساتھ اس کے فوائد سے بھی آگاہ کیا کرتی تھیں۔ کہ واقعی طبیعت میں اک سرور سا آنے لگتا تھا۔ آنکھیں بند ہونے لگتی تھیں۔ لگتا تھا سر پر رکھا کوئی ان دیکھا بوجھ کم ہو گیا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ ہالینڈ آنے کے اتنے سالوں بعد بھی وہ یہ چیز بھولا نہ تھا۔ کبھی کبھی موڈ میں آتا تو اس دیسی نسخے کو آزمانے لگتا۔ آٹھ سالوں میں بمشکل اس کے دو چکر پاکستان کے لگے تھے۔ اب ماں بھی اس کی شادی پر زور دے رہی تھی اور اسے بھی لگ رہا تھا کہ کوئی فیصلہ لے ہی لینا چاہیئے۔



چلو اس بار پاکستان جاؤں گا تو ماں کو شادی بارے سگنل دے دوں گا۔ ماں کتنا خوش ہو گی۔ وہ یہ سوچ کر ہی خوش ہو رہا تھا۔ وہ تین بھائی تھے اور دو بہنیں تھیں۔ دو بھائیوں اور ایک بہن کی شادی ہو چکی تھی۔ اور اب وہ لائن میں لگا ہوا تھا۔ تھوڑی دیر وہ انھی باتوں میں ڈوبا رہا۔ پھر جا کر شاور لیا تو تب تک وہ بالکل سیٹ ہو چکا تھا، بلکہ اب تو لنچ ٹائم ہو رہا تھا اور اس کو بھوک بھی لگنی شروع ہو رہی تھی۔ تب اس نے کچن کا رخ کیا۔



" آج کیا پکاؤں۔ ؟"

خواتین کا :روزنامہ کھانا پکانا: اس کے بھی سامنے تھا۔ اور اب اسے بھی مشکل کا سامنا تھا۔ فرج میں جھانکا، فریزر کھولا۔ کھانا بنانے کے کئی آپشن اس کے سامنے تھے۔ چیزیں تو کافی موجود تھیں، ابھی کل ہی تو گروسری بھی کی تھی۔ تب اس نے مڑ پلاؤاو چکن کڑاہی بنانے کا سوچا۔ رائتہ سلاد بھی بنا لوں گا اور نان بھی موجود ہے۔ مینو بنا کر وہ مطمئن ہو گیا۔ اور چیزوں کو کیبنٹ اور فریزر سے نکالنے لگا۔



یہ فلیٹ ۔۔۔۔ جس میں وہ مقیم تھا، ایک بلاک کی شکل میں بنے ہوئے تھے۔ سب کا نقشہ بالکل ایک جیسا تھا۔ شروع میں جب وہ یہاں آیا تو اپنی جدوجہد کے دور میں تھا، تو اس نے کچھ بچت کی خاطر اچھی رہائش پر تب اتنا زور نہ دیا تھا۔ یونیورسٹی کے نزدیک ایک گھر میں پےانگ گیسٹ رہنے کو ترجیح دی تھی۔ اب وہ پڑھائی سے فارغ تھا، ایک دو کورس بھی لگے ہاتھوں کر لیے تھے۔ اور جاب بھی شروع کر لی تھی۔ تو اچھی رہائش کی بھی ضرورت محسوس ہونے لگی تھی۔ ایک دوست نے ان بلاکس میں بنے فلیٹوں بارے اسے بتایا تھا۔ سارا معاملہ آسانی سے حل ہو گیا۔ سو اب وہ اس فلیٹ میں شفٹ ہو گیا تھا۔ ابھی اسے یہاں زیادہ وقت نہیں گزرا تھا، اس لیے کسی سے تعارف، واقفیت نہیں ہوئی تھی۔



تقریبا زیادہ فلیٹ آباد تھے۔ اس کے ساتھ والا فلیٹ بھی ، بالکل اسی کے گھر والا نقشہ، ڈرائنگ روم کے برابر ڈرائنگ روم ، لاونج کے ساتھ ان کا لاونج، اسی طرح اس کے کچن کے ساتھ ان کا کچن منسلک تھا۔ فلیٹ ابھی غالبا نئے نئے ہی بنے لگتے تھے،



" چلو اچھا ہوا، بروقت یہ فلیٹ مل گیا۔ شادی جلدی ہو گئی تو بیوی کو بھی جلدی لانے کی کوشش کروں گا۔ رہائش کا مسئلہ تو پہلے ہی حل ہو گیا ہے۔"



چاول بھگو رکھے تھے، اور اب وہ چکن بھون رہا تھا۔ دھیان بٹ رہا تھا۔ کبھی کھانے کی طرف متوجہ ہوتا اور کبھی سوچوں میں ڈوب جاتا۔ اچانک کسی برتن کے گرنے کی آواز آئی۔ آواز ہی اتنی زور کی تھی کہ وہ بھی چونک اٹھا۔ یقینا ساتھ والے کچن میں کوئی تھا، لنچ کا وقت تھا، یقینا ادھر بھی یہی مصروفیت ہو گی کھانا بنانے کی۔ اشعر ان ہمسائیوں سے متعارف نہ تھا، لیکن اسے سننے میں آیا تھا کہ کوئی ڈچ فیملی ہے۔



چکن کڑاہی تیار ہو چکی تھی۔ بیچ میں موقع ملتے اس نے سلاد بھی بنا لی تھی۔ اب پلاؤ بنانے کی طرف متوجہ ہوا، اب اس کی ساری سوچوں کا رخ ہمسائیوں کی طرف ہو چکا تھا۔

"پتہ نہیں کون لوگ ہوں گے، کتنے لوگ ہوں گے، کیسے ہوں گے۔ ؟ "

اچانک اسے یاد آیا، جن دنوں وہ اس فلیٹ میں شفٹ ہوا، اور سامان کو ترتیب دے رہا تھا تو اچانک اسے کچن کی درمیانی دیوار جو ہمسائیوں سے مل رہی تھی میں ایک ہول نظر آیا تھا ایک ڈالر کے برابر جتنا۔ وہ دیوار بنانے والوں کی اس چھوٹی سی غلطی پر مسکرا اٹھا تھا، اور اتنا نوٹس نہ لیا تھا۔ اور اسے اگنور کرتے ہوئے اس نے وہاں آگے ایک تصویر لگا دی تھی۔



نہ جانے کیسے اسے وہ چھوٹا سا سوراخ اس وقت یاد آ گیا۔ اور اس کا دل چاہنے لگا کہ وہ اس ہول سے دوسری طرف جھانکے اور دیکھے کہ ادھر کچن میں کون ہے، اور کیا کر رہا ہے یا کیا کر رہی ہے۔ ؟

" نہیں نہیں، یہ تو بڑی غیرمہذب بات ہو گی۔ "اس نے اپنی اس پہلی سوچ کو خود ہی لتاڑا۔

" لو صرف ایک نظر دیکھنے میں کیا قباحت ہے ؟ " اب اس کے دل نے کہا " یہ تو ایک چھوٹی سی معصوم شرارت ہو گی۔""

اور دل کا کہنا غالب ہوا۔

اس نے ہول کے آگے رکھی تصویر اٹھا کر پیچھے رکھی۔ اور دونوں ہاتھ دیوار پر ٹکا کر اپنی ایک آنکھ اس گول سوراخ پر فٹ کی۔ لیکن اسے آگے اندھیرا ہی اندھیرا نظر آیا۔ اس نے سر پیچھے کر کے ہلایا او دوبارہ آنکھ وہاں سوراخ پر ٹکائی اور کچھ دیکھنے اور سمجھنے کی کوشش کرنے لگا، کہ اچانک اسے کرنٹ لگا اور وہ دو سوبیس وولٹیج کی بجلی جیسا جھٹکا کھا کر پیچھے ہٹا۔ کیونکہ ادھر دوسری طرف ایک آنکھ پہلے ہی سوراخ پہ ٹکی ہوئی تھی۔




کائنات بشیر


*+*+*+*+*+*

مرکزی خیال ماخوذ،

شایان
07-10-2010, 05:20 PM
اچھی کوشش ہے

Durre Nayab
07-10-2010, 05:28 PM
مجھے اچھے لگتے ہیں ایسے چھوٹے چھوٹے افسانچے پہلے ماظق بھائی کا پڑھا پھر آپ کا۔ تھوڑا تجسس ہمیشہ ایسے افسانے میں رہتا ہے کہ یہ تو ختم کے قریب ہے اور پتہ نہیں کہانی آگے کیا ہے اور اچانک آخری جملہ آکر کھڑا ہوجاتا ہے۔ تب اصل بات سامنے آتی ہے۔
اچھا لکھا کائنات سس

fiza_chillimilli
07-10-2010, 05:49 PM
ٹائیٹل بہت اچھا ہے۔ پہلے عجیب لگا مگر افسانہ پڑھ کے لگا کہ بالکل فٹ ہے۔
افسانہ اچھا لگا۔
اینڈ میں مجھے بھی ایک جھٹکا لگا۔

KishTaj
07-10-2010, 06:05 PM
واہ واہ
جاندار کوشش اور شاندار افسانہ ۔ ۔ ۔ ۔ اینڈ پڑھ کر بڑا مزہ آیا:)۔
بہت زبردست آپی۔

Meem
07-10-2010, 06:41 PM
واہ جی واہ۔ ویری نائس اور بہت الگ۔ مختصر مگر مزیدار۔ مصنف داد کی مستحق ہیں۔

Noor-ul-Ain Sahira
07-10-2010, 07:50 PM
پیاری کائنات بہت اچھا سادہ چھوٹا سا اور فنی سا افسانہ ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اور لکھا بھی بہت پرفیکٹ طریقے سے ہے:)۔۔

Sehar Azad
07-10-2010, 07:56 PM
Well Done, Good Work, as always, but you need varity in topics

Lubna Ali
07-10-2010, 07:56 PM
ہاہاہہاہاہاہہاااااااااااا اااااااااا۔۔۔افف جیسا کو تیسا شاید اسی لئے کہتے ہیں۔۔۔
بہت خوب کائنات ۔۔۔ پڑھ کر اچھا لگا۔۔۔۔

فائزہ صدف
07-10-2010, 07:59 PM
;d;d;d بہت ہی زبردست لکھا کائنات

اسماء
07-10-2010, 08:19 PM
;d ;d
ھا ھا
واہ واہ۔۔
بہتت مزہ آیا پڑھ کر۔۔۔ بڑا مزے کا لکھا اپیا۔۔ہیرو صاحب ویک اینڈ پر تو بڑے مزے کرتے ہیں اور سگھڑاپہ بھی کمال کا تھا۔۔۔ اتنا زبردست مینیو بنایا اور ادھر سے بھی کوئی دیکھ رہا تھا۔۔۔ھا ھا۔۔۔
کون تھا ویسے؟؟
چھوٹی سی کیوٹ سی سٹوری۔۔ ویری نائس آپیا

Rubab
07-10-2010, 08:26 PM
رائٹرز سوسائٹی کو یہ نیا سلسلہ شروع کرنے پر بے حد مبارکباد، اور ساتھ ہی مصنفین کا شکریہ بھی کہ آپ کی کاوشوں کی وجہ سے ہمیں کچھ الگ، کچھ منفرد سا پڑھنے کو ملے گا۔

افسانے کے انداز سے ہی علم ہو جاتا ہے کہ یہ کائنات سس کا لکھا ہوا ہے، ان کے انداز کی شگفتگی باقی تحریروں کی طرح اس میں بھی موجود ہے۔ انجام کافی چونکا دینے والا تھا اور بے ساختہ ہنسا گیا۔

بہت خوب جناب۔

Sabih
07-10-2010, 09:45 PM
بہت عمدہ کائنات سس
بہت ہی اچھا افسانہ لکھا۔ ۔ ۔
حالات اور منظر بہت عمدگی سے بیان کیے اور اینڈ تو بہت ہی عمدہ رہا۔ ۔ ۔

Sabih
07-10-2010, 10:49 PM
ویسے اگر اس افسانے کا اینڈ ایسا ہوتا کہ جب اشعر کو پتہ چلا کہ دوسری جانب بھی آنکھ لگی ہے تو مرچیں لگا کر انگلی گھسیڑ دیتا سوراخ میں۔ ۔ ۔ ۔ ۔
;d

Wish
07-10-2010, 10:52 PM
ویسے اگر اس افسانے کا اینڈ ایسا ہوتا کہ جب اشعر کو پتہ چلا کہ دوسری جانب بھی آنکھ لگی ہے تو مرچیں لگا کر انگلی گھسیڑ دیتا سوراخ میں۔ ۔ ۔ ۔ ۔
;d


اور کتنا مزا آتا نا کہ وہ آنکھ آپ کی ہوتی۔ ۔ ۔
;d;d

Sabih
07-10-2010, 10:55 PM
اور کتنا مزا آتا نا کہ وہ آنکھ آپ کی ہوتی۔ ۔ ۔
;d;d
:eek:
وہ زنانہ آنکھ تھی۔ ۔ ۔ ۔ کائنات سس کی تحریر پڑھتے ہی پتہ چل جاتا ہے۔ ۔ ۔
ویسے اگر میں ہی ہوتا تو جا کر اشعر کو چائے ضرور آفر کرتا اس کارنامے پر۔ ۔ ۔
;d

Hina Rizwan
08-10-2010, 12:08 AM
ہاہاہا ویری نائیس
مینو کتنا شاندار تھا اور اینڈ بےاختیار ہنسا دینے والا;d

اچھا وہ کل والا افسانہ کہاں ہے مجھے مل نہیں رہا

Sabih
08-10-2010, 12:12 AM
ملے گا بھی نہیں جی۔ ۔ ۔
کیا سمجھا ہے کہ پرانا ریکارڈ بھی یہیں رکھیں گے ہم؟؟؟:p
یہ آج کا افسانہ ہے کل کا افسانہ نہیں۔ ۔ ۔:p

Hina Rizwan
08-10-2010, 12:16 AM
ملے گا بھی نہیں جی۔ ۔ ۔
کیا سمجھا ہے کہ پرانا ریکارڈ بھی یہیں رکھیں گے ہم؟؟؟:p

تو کہاں رکھا ہے
اب اتنا بھی پرانا نہیں تھا کہ اسے اسٹور میں ڈال دیا جائے

Sabih
08-10-2010, 12:17 AM
تو کہاں رکھا ہے
اب اتنا بھی پرانا نہیں تھا کہ اسے اسٹور میں ڈال دیا جائے
بھئی موجودہ سیٹ اپ کے تحت چوبیس گھنٹے ہیں اس میں پڑھ لیں پھر وہ بحق سرکار ضبط کر لیا جائے گا۔ﺍ ۔ ۔

Hina Rizwan
08-10-2010, 12:19 AM
بھئی موجودہ سیٹ اپ کے تحت چوبیس گھنٹے ہیں اس میں پڑھ لیں پھر وہ بحق سرکار ضبط کر لیا جائے گا۔ﺍ ۔ ۔

ہیں:o
بس چوبیس گھنٹے
تو پہلے کیوں نہیں بتایا
میں محروم رہ گئی پڑھنے سے

Sabih
08-10-2010, 12:22 AM
ہیں:o
بس چوبیس گھنٹے
تو پہلے کیوں نہیں بتایا
میں محروم رہ گئی پڑھنے سے
چلیں اگلے تو ریگولرلی پڑھیں یا کسی کی ڈیوٹی لگا دیں کہ سیو کر لیا کرے۔ ۔ ۔
یہاں تو روزانہ نیا افسانہ نظر آئے گا۔ ۔ ۔

danybaby
08-10-2010, 04:41 AM
ahhh,,u jus made my day,,,as i was extremly bored and i clicked ajj ka afsana,,ufff mujhe bhe end main 100 watt ka shock laga,,,hahahha,,i cant explain how much i enjoyed it,,thankz for sharing,,,,,,;d

HarfeDua
08-10-2010, 04:42 AM
بہت اچھا ہے۔ لائٹ سے افسانے اچھے لگتے ہیں مجھے۔

NaimaAsif
08-10-2010, 04:47 AM
اچھا افسانہ لکھا کائنات سس۔ ہلکا پھلکا۔

افسانے کا نام بے حد خوبصورت چنا آپ نے۔

مگر افسانے میں نام جیسی خوبصورتی نہیں ملی۔ جس طرح افسانہ شروع ہوا اس کے مطابق آخر ایسا ہو کر افسانہ انجام کو پہنچ جائے گا ایسا ذہن تیار نہیں ہو سکا۔
آخر پڑھ کر ایک لمحے کو مسکراہٹ آئی ضرور مگر ایسا معلوم ہوا کہ جیسے یکدم ہی کہانی الٹی ہو اور ختم ہو گئی ہو۔
امید ہے تبصرہ کم تنقید کا بُرا نہیں منائیں گی۔:) ایک بہت اچھی کوشش ہے۔ تھینکس۔:)

Hira Qureshi
08-10-2010, 05:27 AM
بہت اچھا لکھا ہے کائنات۔ خاص طور پر اینڈ ایک دم سے ہوگیا۔۔۔ پسند آیا مجھے۔

Aqsa
08-10-2010, 06:45 AM
کائینات آپکا افسانہ بہت مزے کا لگا۔ شروع سے آخر تک تجسس برقرار رہا۔ اور انسانی فطرت کی یکسانیت اور بڑھتی ہوئی معاشرتی لاتعلقی میں بھی جو ایک بےنام سا تعلق ازل سے جڑا ہے اسے بہت لطیف انداز میں آپ نے پیش کیا ہے۔ کہانی ماخوذ ہونے کے باوجود اپکے بیان میں مقامی معاشرے کا رچاؤ ہے۔

Fozan
08-10-2010, 07:14 AM
السلام علیکم۔

مجھے نہیں پتا کہ یہ تھریڈ مناسب ہے اس موضوع پر بات کرنے کیلئے۔۔۔۔"آج کا افسانہ" کا سلسلہ ناصرف لکھاری ممبران کی حوصلہ افزائی کیلے بہت ضروری ہے، وہیں قاری ممبران کو معیاری اور عام سے ہٹ کر تحاریر فراہم کرنے کا بھی ذریعہ ہے جو ان میں بھی ادبی ذوق کا اضافہ کرے گا اور پھر معیاری ادب لکھنے کی طرف متوجہ بھی۔۔۔۔۔

بس ایک بات کی مجھے سمجھ نہیں آ رہی کہ آج کا افسانہ صرف چوبیس گھنٹے کیلئے کیوں فراہم کیا جا رہا ہے؟

آج سے بیس برس پہلے کمرشلزم کی بنیاد اس بات پر تھی کہ جتنی نایاب چیز ہو گی اتنی ہی ڈیمانڈ بڑھے گی۔ وقت کے ساتھ ساتھ اس میں تبدیلی آئی اور اب کسی چیز کسی خیال کو عام کرنے کیلئے اسکی فراوانی پر انحصار کیا جاتا ہے۔ ایسے میں افسانوں کو قاری کی نظر سے اوجھل کر دینے کا مقصد سمجھ نہیں آ رہا!


مجھ جیسے قاری نے تو ابھی پہلے افسانے کو ہی مکمل طور پر سمجھا نہیں کہ وہ غائب ہو گیا ۔۔۔۔ابھی تو میں نے اسے پھر سے پڑھنا تھا، غور کرنا تھا اور مزید تبصرہ کرنا تھا۔۔۔۔

آج میرے پاس دوسرے افسانے کو پڑھنے کا وقت نہیں، جبکہ کائنات سس کا افسانہ نہ پڑھنا خود پر ظلم ہو گا۔۔۔۔اور یہ بھی ہو سکتا ہے کہ کسی کو سمارا سس کے افسانے کا انتظار ہو اور کل وہ ممبر آن لائن ہی نہ ہو!

اگر تو یہ سب افسانے کچھ عرصے بعد افسانوں کے سیکشن میں پوسٹ ہو جائیں گے تو پھر تو ٹھیک ہے ورنہ قاری کو بھی تشنگی رہے گی اور لکھاری کو بھی کہ ابھی تو مزید تبصرےآنےتھے۔۔۔۔باقی تو آپ مجھ سے بہتر جانتے اور سمجھتے ہیں۔۔۔۔

امید ہے میری رائے کا برا نہیں منایا جائے گا۔

Samia Ali
08-10-2010, 11:04 AM
بہت خوب کائنات سس بہت اچھا لکھا ہمیشہ کی طرح


بس ایک بات کی مجھے سمجھ نہیں آ رہی کہ آج کا افسانہ صرف چوبیس گھنٹے کیلئے کیوں فراہم کیا جا رہا ہے؟

میرا بھی فوزان سس والا ہی سوال ہے میں نہیں پڑھ پائی تھی سمارا سس کا افسانہ اب دوسرے دن دیکھا تو غائب

Star
08-10-2010, 11:45 AM
بہت اچھا افسانہ ہے کائنات سس۔

فوازن سس والا سوال میرا بھی ہے۔ سم ٹائم پورا دن نہیں آپاتے۔۔۔تو کیا اتنے اچھے افسانے پڑھنے سے محروم رہ جائیں گے۔:(

Parishay
08-10-2010, 12:00 PM
بہت زبردست۔ سس بہت اچھا لگا۔

Kainat
08-10-2010, 01:33 PM
بہت اچھا لکھا ہے کائنات۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

آنکھیں کیسے چار ہوئی۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ہاہاہا۔-------------

بہت اچھا لگا آپ کا کمنٹ روشنی جی،
ان کے حسب حال مجھے بھی کچھ یاد آ رہا ہے،

آنکھوں ہی آنکھوں میں اشارہ ہو گیا
بیٹھے بیٹھے جینے کا سہارا ہو گیا


پیاری کائنات بہت اچھا سادہ چھوٹا سا اور فنی سا افسانہ ہے۔۔۔۔۔۔۔۔۔ اور لکھا بھی بہت پرفیکٹ طریقے سے ہے:)۔۔

ساحرہ افسانہ تو آپکے نوک قلم سے وجود میں آتا ہے۔ میں تو بس کوشش کرتی ہوں۔:)


Well Done, Good Work, as always, but you need varity in topics

سوچنا پڑے گا آپکے پوائنٹ پر ۔۔۔۔ ورنہ میرا تو خیال تھا کہ میں ورائیٹی میں لکھتی ہوں ۔۔۔ بس انداز وہی آپ سب کا جانا پہچانا ہے۔:)

ویسے اگر اس افسانے کا اینڈ ایسا ہوتا کہ جب اشعر کو پتہ چلا کہ دوسری جانب بھی آنکھ لگی ہے تو مرچیں لگا کر انگلی گھسیڑ دیتا سوراخ میں۔ ۔ ۔ ۔ ۔
;d

شکر ہے ہیرو کی جگھ آپ نہیں تھے۔ ورنہ آپ تو ولن والا کام کرتے۔

fatima201
08-10-2010, 01:43 PM
very nice!!!!

Kainat
08-10-2010, 01:52 PM
ہاہاہا ویری نائیس
مینو کتنا شاندار تھا اور اینڈ بےاختیار ہنسا دینے والا;d
اچھا وہ کل والا افسانہ کہاں ہے مجھے مل نہیں رہا
حنا آپ کو افسانے میں مینو اچھا لگا۔۔۔ ضرور فائدہ اٹھائیے گا، آخر رائیٹر جس طرح کبھی کبھی قاری کی تربیت کر رہا ہوتا ہے اسی طرح کبھی اس کی مشکل بھی حل کر رہا ہوتا ہے۔
;)

اچھا افسانہ لکھا کائنات سس۔ ہلکا پھلکا۔

افسانے کا نام بے حد خوبصورت چنا آپ نے۔

مگر افسانے میں نام جیسی خوبصورتی نہیں ملی۔ جس طرح افسانہ شروع ہوا اس کے مطابق آخر ایسا ہو کر افسانہ انجام کو پہنچ جائے گا ایسا ذہن تیار نہیں ہو سکا۔
آخر پڑھ کر ایک لمحے کو مسکراہٹ آئی ضرور مگر ایسا معلوم ہوا کہ جیسے یکدم ہی کہانی الٹی ہو اور ختم ہو گئی ہو۔
امید ہے تبصرہ کم تنقید کا بُرا نہیں منائیں گی۔ ایک بہت اچھی کوشش ہے۔ تھینکس۔

شکریہ نائمھ، آپ نے کھل کر تبصرہ کیا، یہ ایک پریکٹیکل افسانہ تھا سو آپ کو جھٹکا لگنا بھی ضروری تھا ورنہ تو قاری آغاز سے ہی اپنی سوچ کے گھوڑے دوڑانے لگتا ہے۔ اور یہاں یہ کام میں نے ریڈر کو نہیں کرنے دیا۔;)

NaimaAsif
08-10-2010, 01:58 PM
شکریہ نائمھ، آپ نے کھل کر تبصرہ کیا، یہ ایک پریکٹیکل افسانہ تھا سو آپ کو جھٹکا لگنا بھی ضروری تھا ورنہ تو قاری آغاز سے ہی اپنی سوچ کے گھوڑے دوڑانے لگتا ہے۔ اور یہاں یہ کام میں نے ریڈر کو نہیں کرنے دیا۔;)

ہاہاہا ارے آپ تو ریڈرز کے حقوق پر ڈاکہ ڈال رہی ہیں۔

ویسے میں نے ڈرتے ڈرتے ہی تبصرہ کیا تھا کہ کہین برا ہی نہ مان لیا جائے۔ بہت شکریہ برا نہ ماننےکے لیے۔~

Ahmeren
08-10-2010, 01:59 PM
ویسے کائنات سسس یہ تو بالکل ایک افسانہ پڑھا تھا اس جیسا ہے ماخوذ کیا ترجمہ کو کہتے ہیں۔

Kainat
08-10-2010, 02:01 PM
عزیز بہنوں اور بھائیو،
یہ ۔۔۔۔ آج کا افسانہ ۔۔۔ سیریز ہے۔
اور آج کا کام کل پر مت چھوڑو۔
سو یہ کام آپ کو آج ہی کرنا پڑے گا۔
چند گھنٹے باقی ہیں ۔۔۔۔ چلے آئیے اور پڑھ دیکھیے یہ افسانہ ۔۔۔
ورنہ ۔۔۔ ورنہ ۔۔۔ جس طرح سمارا کا افسانہ بادلوں کے سفر کے ساتھ روانہ ہو گیا ہے اسی طرح یہ افسانہ ۔۔۔ فریب آرزو ۔۔۔ بھی آپ کو فریب دے کر نگاہوں سے اوجھل ہو جائے گا۔ پھر مت کہیے گا خبر نہ ہوئی۔

رمیصا
08-10-2010, 02:36 PM
اف۔۔۔اینڈ اتنا مزے کا ہے نا۔حالانکہ تبصرے پڑھے ہیں سب کے لیکن افسانے میں اتنی محو تھی کہ بھول گی آنکھ تھی دوسری ،مجھے لگا شاید اس ہول میں کوئی وائر وغیرہ تھی اور اندھیرا تھا تو کرنٹ لگ گیا سچ میں بے چارے کو۔
بہت اچھا افسانہ ہے،ویلا بندہ اور وہ بھی کلا ہو تو کچھ اسی قسم کی سوچیں ذہن میں گردش کرتی رہتی ہیں۔کیپ رائٹنگ۔

Sabih
08-10-2010, 03:00 PM
اف۔۔۔اینڈ اتنا مزے کا ہے نا۔حالانکہ تبصرے پڑھے ہیں سب کے لیکن افسانے میں اتنی محو تھی کہ بھول گی آنکھ تھی دوسری ،مجھے لگا شاید اس ہول میں کوئی وائر وغیرہ تھی اور اندھیرا تھا تو کرنٹ لگ گیا سچ میں بے چارے کو۔
بہت اچھا افسانہ ہے،ویلا بندہ اور وہ بھی کلا ہو تو کچھ اسی قسم کی سوچیں ذہن میں گردش کرتی رہتی ہیں۔کیپ رائٹنگ۔

لگتا ہے کہ چین میں ایسے ہی پڑوسیوں کو کرنٹ مارنے کا رواج ہے۔ ۔ ۔
شکر ہے کائنات سس نے چین جا کر یہ افسانہ نہیں لکھا۔ ۔ ۔

Kainat
08-10-2010, 03:20 PM
اف۔۔۔اینڈ اتنا مزے کا ہے نا۔حالانکہ تبصرے پڑھے ہیں سب کے لیکن افسانے میں اتنی محو تھی کہ بھول گی آنکھ تھی دوسری ،مجھے لگا شاید اس ہول میں کوئی وائر وغیرہ تھی اور اندھیرا تھا تو کرنٹ لگ گیا سچ میں بے چارے کو۔
بہت اچھا افسانہ ہے،ویلا بندہ اور وہ بھی کلا ہو تو کچھ اسی قسم کی سوچیں ذہن میں گردش کرتی رہتی ہیں۔کیپ رائٹنگ۔


ارے واہ ۔۔۔ یہ بھی اینڈ ہو سکتا تھا رمیصا،:)

رمیصا
08-10-2010, 04:23 PM
لگتا ہے کہ چین میں ایسے ہی پڑوسیوں کو کرنٹ مارنے کا رواج ہے۔ ۔ ۔
شکر ہے کائنات سس نے چین جا کر یہ افسانہ نہیں لکھا۔ ۔ ۔

ارے کائینات افسانہ یہاں آکر لکھتیں تو ایک سو ایک طریقے ملتے ۔۔۔چینیوں نے کرنٹ مار مار کر ہی تو بال اڑائے ہیں اپنے۔

کبھی ہول سے تو کبھی دیوار بجا کر،کبھی پائپ بجا کر،کبھی سپیکر چلا کر اور۔۔۔۔۔۔۔کبھی سچی مچی کا کرنٹ۔

رمیصا
08-10-2010, 04:24 PM
ارے واہ ۔۔۔ یہ بھی اینڈ ہو سکتا تھا رمیصا،:)

ہاں لیکن پھر اکیلے بندے کے لیے ایمبولینس کون بلواتا؟

Sabih
08-10-2010, 04:31 PM
ارے کائینات افسانہ یہاں آکر لکھتیں تو ایک سو ایک طریقے ملتے ۔۔۔چینیوں نے کرنٹ مار مار کر ہی تو بال اڑائے ہیں اپنے۔

کبھی ہول سے تو کبھی دیوار بجا کر،کبھی پائپ بجا کر،کبھی سپیکر چلا کر اور۔۔۔۔۔۔۔کبھی سچی مچی کا کرنٹ۔

کیا مطلب آپ کے بال ہی اڑ چکے۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔:o:o

ارے کائنات سس
آپ اگلا افسانہ ایک ایسی ہی مظلوم پاکستانی لڑکی پر لکھنا جس کے چینیوں نے کرنٹ لگا لگا کر بال ہی فشوں کر دیے۔ ۔ ۔ ۔:cool:

رمیصا
08-10-2010, 05:14 PM
کیا مطلب آپ کے بال ہی اڑ چکے۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔:o:o

ارے کائنات سس
آپ اگلا افسانہ ایک ایسی ہی مظلوم پاکستانی لڑکی پر لکھنا جس کے چینیوں نے کرنٹ لگا لگا کر بال ہی فشوں کر دیے۔ ۔ ۔ ۔:cool:

ارے چینی اڑاتے ہیں اپنے بال ہمارے تھوڑا ہی۔
ویسے آئیڈیا اچھا ہے افسانے کا۔۔۔۔کیا افسانہ ہو گا،اڑے ہوئے بالوں والے۔۔۔۔
بس تھوڑی ریپلیسمنٹ آئڈیے میں۔

Aqsa
08-10-2010, 05:36 PM
POST ANALYSIS

HarfeDua
10-10-2010, 12:06 AM
رافعہ شاید آپ نے پوسٹ سیپیریٹ کی ہیں تو میری پوسٹ شروع میں ہے۔ میں ڈلیٹ کرکے دوبارہ پوسٹ کردوں؟
یہ تھریڈ میں نے تو اسٹارٹ نہیں کیا تھا ~۔

HJaved
10-10-2010, 03:10 AM
ہمیشہ کی طرح چونکا دینے والا اینڈ اور شگفتہ تحریر۔
اداس اداس باتیں پڑھتے اچانک ہنسی کا فوارہ چھوٹ جاتا ہے۔
پوائنٹی شاباش۔

Fozan
10-10-2010, 03:19 AM
بہت خوب کائنات سس۔۔۔۔ایک انفرادیت اور شخصی آزادی کے مارے ہوئے معاشرے کی اچھی تصویر کشی ہے، جہاں انجمن میں تنہائی اور تنہائی میں کسی کے احساس کی ضرورت محسوس ہوتی رہتی ہے۔

ویسے پاکستان شادی کیلئے تو نہ گئے اب اشعر صاحب۔۔۔۔;d۔

niuslyguy
10-10-2010, 04:20 AM
آپ کا افسانہ بہت اچھا تھا شروع میں جس طرح آپ نے اشعر کے اردگرد کے ماحول کی عکاسی کہ مجھے بہت اچھی لگی اور جس طرح اس ے منیو ترتیب دیا ہم ہم ہم مجھے تو بہت اچھا لگا اینڈ ایک دم سامنے آگیا لیکن اچھا اینڈ تھا

بنت احمد
10-10-2010, 07:08 AM
ہاہاہا۔۔۔ بہت اچھا ہے سس،
(یہ آپ کے سب لکھے ہوئے پر کمنٹ سمجھیں، کل آدھا دن آپ کا پورا بلاگ پڑھا ہے)

Kainat
10-10-2010, 12:40 PM
ہاہاہا۔۔۔ بہت اچھا ہے سس،
(یہ آپ کے سب لکھے ہوئے پر کمنٹ سمجھیں، کل آدھا دن آپ کا پورا بلاگ پڑھا ہے)

بنت سس،
بہت شکریہ پسند کرنے کے لیے،:)
پر بھئ بلاگ کا حساب آپ کو بلاگ میں چکتا کرنا ہو گا۔
میری پورے ایک سال کی محنت کو آپ ایک چھوٹے سے کمنٹ میں اور
وہ بھی کسی دوسرے تھریڈ میں کیسے ۔۔۔۔۔ نہیں نہیں آپ ایسا نہیں کر سکتیں۔:(

Kainat
10-10-2010, 12:42 PM
آپ کا افسانہ بہت اچھا تھا شروع میں جس طرح آپ نے اشعر کے اردگرد کے ماحول کی عکاسی کہ مجھے بہت اچھی لگی اور جس طرح اس ے منیو ترتیب دیا ہم ہم ہم مجھے تو بہت اچھا لگا اینڈ ایک دم سامنے آگیا لیکن اچھا اینڈ تھا

بہت شکریہ آپ کو افسانہ اچھا لگا اور مینو بھی،:)

Kainat
10-10-2010, 12:45 PM
ہمیشہ کی طرح چونکا دینے والا اینڈ اور شگفتہ تحریر۔
اداس اداس باتیں پڑھتے اچانک ہنسی کا فوارہ چھوٹ جاتا ہے۔
پوائنٹی شاباش۔

شکریہ ہما جی ۔۔۔۔۔ دیکھا پھر بھی آپ کو ہنسا دیا نا ۔۔۔۔۔:)

Kainat
10-10-2010, 12:49 PM
بہت خوب کائنات سس۔۔۔۔ایک انفرادیت اور شخصی آزادی کے مارے ہوئے معاشرے کی اچھی تصویر کشی ہے، جہاں انجمن میں تنہائی اور تنہائی میں کسی کے احساس کی ضرورت محسوس ہوتی رہتی ہے۔

ویسے پاکستان شادی کیلئے تو نہ گئے اب اشعر صاحب۔۔۔۔;d۔

بہت شکریہ آمنہ جی،
آپ نے اپنے ٹائٹ شیڈول سے ٹائم نکال کر بروقت میری یہ تحریر پڑھی اور اس پر اپنا رسپانس دیا۔:)

Kainat
10-10-2010, 01:03 PM
ہمیشہ کی طرح superb۔۔۔ افسانہ اور اس کا میسج تو اچھا ہے ہی لیکن ٹائٹل بھی بہت اچھا ہے۔ اور ڈیزائننگ بھی۔



بہت اچھا ہے۔ لائٹ سے افسانے اچھے لگتے ہیں مجھے۔

بہت شکریہ دعا سس،
آپ کو افسانہ اچھا لگا اور ساتھ ہی آپ نے اس کی ڈیزائننگ پر بھی توجہ کی۔
یہ سلمان بھائی کی منفرد ڈیزائننگ تھی۔ سو میری طرف سے ان کا بے حد شکریہ،

Kainat
10-10-2010, 01:06 PM
ہاہاہہاہاہاہہاااااااااااا اااااااااا۔۔۔افف جیسا کو تیسا شاید اسی لئے کہتے ہیں۔۔۔
بہت خوب کائنات ۔۔۔ پڑھ کر اچھا لگا۔۔۔۔

شکریہ،
جی ہاں لبنی ۔۔۔۔ محاورے پر بھی یہ خوب فٹ ہوا۔;)

Kainat
10-10-2010, 01:10 PM
;d;d;d بہت ہی زبردست لکھا کائنات

تھینکس،

رائٹرز سوسائٹی کو یہ نیا سلسلہ شروع کرنے پر بے حد مبارکباد، اور ساتھ ہی مصنفین کا شکریہ بھی کہ آپ کی کاوشوں کی وجہ سے ہمیں کچھ الگ، کچھ منفرد سا پڑھنے کو ملے گا۔

افسانے کے انداز سے ہی علم ہو جاتا ہے کہ یہ کائنات سس کا لکھا ہوا ہے، ان کے انداز کی شگفتگی باقی تحریروں کی طرح اس میں بھی موجود ہے۔ انجام کافی چونکا دینے والا تھا اور بے ساختہ ہنسا گیا۔

بہت خوب جناب۔

پسند کرنے کے لیے بہت شکریہ،
سمارا آپکی کی تعریف سن کر میں ویسا ہی محسوس کر رہی ہوں۔ جب ایک رائیٹر دوسرے رائیٹر کی تعریف کرتا ہو گا۔:)

Kainat
10-10-2010, 01:17 PM
بہت اچھا لکھا ہے کائنات۔ خاص طور پر اینڈ ایک دم سے ہوگیا۔۔۔ پسند آیا مجھے۔

شکریہ حرا،
یہ اس لیے مختصر تھا کہ نہ تو اس میں ڈائلاگ تھے اور نہ ہی کوئی جذباتیت و حساسیت، :)

;d ;d
ھا ھا
واہ واہ۔۔
بہتت مزہ آیا پڑھ کر۔۔۔ بڑا مزے کا لکھا اپیا۔۔ہیرو صاحب ویک اینڈ پر تو بڑے مزے کرتے ہیں اور سگھڑاپہ بھی کمال کا تھا۔۔۔ اتنا زبردست مینیو بنایا اور ادھر سے بھی کوئی دیکھ رہا تھا۔۔۔ھا ھا۔۔۔
کون تھا ویسے؟؟
چھوٹی سی کیوٹ سی سٹوری۔۔ ویری نائس آپیا



اسماء سس، بہت شکریہ
آپ کی تعریف مجھے بے حد اچھی لگی۔
افسانہ لکھتے ہوئے مجھے اندازہ بھی نہ تھا کہ
اس میں ہیرو کا بنایا کھانے کا مینو بھی سب کو اتنا اچھا لگے گا
ورنہ میں اسے ناشتہ بھی ذرا زبردست اور بادشاہوں والا کرواتی۔:)

Nesma
10-10-2010, 09:11 PM
بہت خوب کائنات


;d;d

بنت احمد
11-10-2010, 02:15 AM
بنت سس،
بہت شکریہ پسند کرنے کے لیے،:)
پر بھئ بلاگ کا حساب آپ کو بلاگ میں چکتا کرنا ہو گا۔
میری پورے ایک سال کی محنت کو آپ ایک چھوٹے سے کمنٹ میں اور
وہ بھی کسی دوسرے تھریڈ میں کیسے ۔۔۔۔۔ نہیں نہیں آپ ایسا نہیں کر سکتیں۔:(


٭سفید جھنڈا اسمائیلی٭
زیادتی تو ہے سس،
پر مجھے پتا نہیں کہ پرانے بلاگ پر کمنٹ کا معلوم ہوگا کہ نہیں۔ اس لئے ادھر کہہ دیا۔

یہ چھوٹا سا کمینٹ" بہت اچھا لکھا ہے" آپ کے سب لکھے پر پورا آتا ہے سس، ماشاءاللہ آپ نے جو بھی لکھا اچھا لکھا ہے۔

Wish
11-10-2010, 05:27 PM
ہاہاہا ویری نائس کائنات سس۔ ۔ ۔
وہ دوسری آنکھ بھی نا۔ ۔ ۔ توبہ۔ ۔ ۔

ویسے یوں جھانکنا بڑی بری بات ہے۔ ۔ ۔ لیکن مزا آیا۔ ۔
آئندہ اگر کبھی میں نے کہیں جھانکا اور پکڑی گئی تو کہوں گی کائنات سس کے افسانے سے امپریس ہو کر ایسا کیا۔ ۔ ۔
;)
;d

ویل ڈن جناب۔ ۔ ۔

Kainat
14-10-2010, 08:54 PM
٭سفید جھنڈا اسمائیلی٭
زیادتی تو ہے سس،
پر مجھے پتا نہیں کہ پرانے بلاگ پر کمنٹ کا معلوم ہوگا کہ نہیں۔ اس لئے ادھر کہہ دیا۔

یہ چھوٹا سا کمینٹ" بہت اچھا لکھا ہے" آپ کے سب لکھے پر پورا آتا ہے سس، ماشاءاللہ آپ نے جو بھی لکھا اچھا لکھا ہے۔

ٓآپ کی اتنی اچھی تعریف یقینا مجھے آگے بڑھنے میں مدد دے گی۔:)

Kainat
14-10-2010, 08:56 PM
ہاہاہا ویری نائس کائنات سس۔ ۔ ۔
وہ دوسری آنکھ بھی نا۔ ۔ ۔ توبہ۔ ۔ ۔

ویسے یوں جھانکنا بڑی بری بات ہے۔ ۔ ۔ لیکن مزا آیا۔ ۔
آئندہ اگر کبھی میں نے کہیں جھانکا اور پکڑی گئی تو کہوں گی کائنات سس کے افسانے سے امپریس ہو کر ایسا کیا۔ ۔ ۔
;)
;d

ویل ڈن جناب۔ ۔ ۔

شکریہ سس،
وش آئیڈیا بے شک اس افسانے سے لو ۔۔۔۔ پر جھانکنا اپنی گارنٹی پہ ۔۔۔۔۔:)

Taaliah
17-10-2010, 02:59 AM
اچھا ہلکا پھلکا افسانہ تھا۔
تنہائی میں انسان واقعی بعض دفعہ اوٹ پٹانگ کام بھی سوچ لیتا ہے جو اس نے پہلے کبھی نہیں کیے ہوتے۔ اور "ڈور آئی" کے بارے میں تو پتا تھا لیکن " وال آئی" کے بارے میں اس افسانے سے ہی پتا چلا۔
کیپ رائٹنگ۔

Ahmed Lone
19-10-2010, 04:57 AM
اس افسانے کے لیے بہت بہت شکریہ

Madiha
11-11-2010, 03:42 PM
مختصر افسانہ تھا پر اچھا لکھا جس طرح ہیرو کو جھٹکا لگا میرے خیال میں اسی طرح سبھی کو جھٹکا لگا ہوگا :)